ایف آئی اے نے علامہ طاہر اشرفی کے خلاف تحقیقات شروع کردیں ،

ایف آئی اے نے علامہ طاہر اشرفی کے خلاف تحقیقات شروع کردیں ،ڈھائی برس قبل ایف آئی اے کو درخواست دی گئی تھی جس میں پاکستان علما کونسل کے چیئرمین علامہ طاہر اشرف کے خلاف انکوائری کرنے کی استدعا کی گئی تھی ،مذکورہ درخواست بھی کسی اور نے نہیں بلکہ 25برس تک ایک ساتھ رہنے والے قریبی دوست مولانا زاہد محمود قاسمی نے دی تھیں ۔

طاہر اشرفی کا اصل حافظ طاہر محمود ہے جب کہ وہ ملک بھر سمیت دنیا بھر میں اپنا تعارف پاکستان علما کونسل کے چیئرمین کی حیثیت سے کراتے ہیں ،علامہ طاہر محمود اشرفی کے بارے میں معلوم رہے کہ وہ صرف حافظ قرآن ہیں اور مدرسہ کے ابتدائی دو تین کلاسیں پڑھنے کے بعد مدرسہ چھوڑ دیا تھا ،علامہ طاہر اشرفی کی جانب سے شروع سے ہی ایک جانب علمائے کرام سے تعلق بنا کر رکھا اور دوسری جانب انہی علمائے کرام کی مخبریاں بھی سرکاری اداروں میں کرکے ‘‘معاوضہ ’’وصول کرتے رہے ہیں ۔

علامہ طاہر اشرفی نے دیرینہ ساتھی مولانا زاہد محمود قاسمی کو بتائے بغیر امریکا و یورپ میں گہرا اثر ورسوخ رکھنے والے ڈاکٹر اظہر سے روابط قائم کرکے ان کے زریعے جرمنی اور امریکا سے مدارس میں کام کرنے کے لئے فنڈ حاصل کیا تھا جس کی وجہ سے طاہر محمو د اشرفی کے اکاؤنٹ میں امریکی ڈالر اور یورو آئے تھے ،جس کی تحقیقات اب باقاعدہ ایف آئی اے اینٹی ٹیررازم لاہور ونگ کی جانب سے شروع کردی گئی ہیں جس میں ہوشربا انکشافات ہونے نے امکانات ہیں ۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *