پاک کالونی SHO نےجعلی کنکشن مافیا چھوڑ کر محنت کش دھر لئے

رپورٹ : اختر شیخ
پاک کالونی SHO عامر الطاف نے اورنگی نالے میں جعلی کنکشن مافیا کو چھوڑ کرقانونی کام کرنے والے محنت کشوں کو دھر لیا .

گزشتہ روز SHO پاک کالونی عامر الطاف نے اورنگی نالے میں آپریشن کیا ،جس میں واٹر بورڈ‌ کے چیف سیکورٹی آفیسر میجر(ر)محمود نواز گوندل ،متعلقہ ایگزیکٹیو انجنیئر (ایکسین )کو علم میں لائے بغیر غیر قانونی پانی کا دھندہ کرنے والوں کو چھوڑ کر عمر سب سوئل پلائی کے ملازم کو گرفتار کرکے مقدمہ قائم کرلیا .

ایس ایچ او عامر الطاف نے عمیر سب سوئل سپلائی کمپنی کے ملازم کو حراست میں لیکر ان سے مشینین ،کٹرز ، جنریٹراور دیگر سامان بھی تحویل میں لے لیا تھا .جب کہ رات گئے مقدمہ درج کرنے کی بھی اطلاعات تھییں ، نمائندہ الرٹ نیوز نے اس حوالے سے متعدد بار ایس ایچ او عامر الطاف سے رابطہ کرنے کی کوشش کی تاہم انہوں نے فون ریسیو نہیں‌ کیا .

ادھر واٹر اینڈ‌ سیوریج بورڈ‌ کے چیف سیکورٹی آفیسر میجر (ر)نواز گوندل نے نمائندہ الرٹ نیوز کو بتایا ہم نے آپریشن کرنا تھا تاہم پولیس کی جانب سے ہمیں نفری کی موجودگی اور تیاری کی اطلاع نہیں دی جس کی وجہ سے ہم نے آپریشن موخر کردیا تھا اور ہمیں‌ آج کسی بھی آپریشن کی اطلاع نہیں ہے .

ادھر عمیر سب سوئل سپلائی کمپنی کی انتطامیہ کا موقف سامنے آیا ہے کہ ہماری لائسنس یافتہ سب سوائل لائن واٹر سپلائر کمپنی سے ایس ایچ او پاک کالونی عامر الطاف نے لاکھوں روپے رشوت کا مطالبہ کیا تھا جو ہم نے نہیں‌ دیئے جس کے بعد ایس ایچ اوعامرالطاف نے رشوت نہ ملنے پرہمارے مزدورں کو تھانےمیں لےجا کر بند کردیا تھا .

متاثرین کے مطابق ایس ایچ او پاک کالونی نے پہلے 2 لاکھ روپے کی ڈیمانڈ کی ، جس کے بعد 50 ہزارروپے دینےکے باوجود مقدمہ بھی درج کرا دیا تھا ،لہذاہ ہماری آئی جی سندھ ڈاکٹر کلیم امام سے درخواست ہے کہ ہماری دستاویزات چیک کی جائیں اور اس کے بعد ایس ایچ او پاک کالونی کی رشوت ستانی کے خلاف کارروائی عمل میں لائیں .

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *