ڈاکٹر عاصم حسین کو سندھ HES کا چیئرمین بنانے کیخلاف عدالت سے رجوع

گلوبل فاؤنڈیشن نے ڈاکٹر عاصم حسین چیئرپرسن سندھ ہائر ایجوکیشن کمیشن کیخلاف سندھ ہائی کورٹ میں پٹیشن دائر کردی۔

ڈاکٹر عاصم حسین کو غیر قانونی طور پر سندھ حکومت کی جانب سے سندھ ہائر ایجوکیشن کمیشن کے چیئرپرسن کا عہدہ دینے پر گلوبل فاؤنڈیشن نے سندھ ہائی کورٹ سے رجوع کرلیا۔ گلوبل فاؤنڈیشن نے یہ موؤقف اختیا ر کیا ہے کہ 2013 میں ڈاکٹر عاصم حسین کو سندھ گورنمنٹ نے چار سال کیلئے سندھ ہائر ایجوکیشن کا چیئرپرسن بنایا تھا جس کی مددت 2017 کو ختم ہوگئی اسکے بعد 26 جنوری 2018 کو چیف سیکریٹری سندھ نے دوبارہ نوٹیفکیشن جاری کیا .

جس میں لکھا تھا کہ ڈاکٹر عاصم حسین کو ایک بار پھر چیئرپرسن کے عہدے پر لگادیا گیا ہے ۔ جبکہ گلوبل فاؤنڈیشن کے وکیل ایڈوکیٹ سپریم کورٹ ناصر رضوان خان نے یہ موؤ قف اختیا ر کیا کہ سندھ ہائر ایجوکیشن کمیشن کے 2013 ایکٹ کے تحت سیکشن 6 کی سب سیکشن 5 میں یہ واضح لکھا گیا ہے کہ جو شخص ایک بار اس عہدے پر آجائے گا اس کے بعد دوبارہ اس عہدے کا اہل نہیں ہے۔

عدالت نے گلوبل فاؤنڈیشن کے اس موؤقف کو درست تسلیم کرتے ہوئے پٹیشن کو ایڈمٹ کیا اور 23 اپریل 2019 کو ڈاکٹر عاصم حسین، چیف سیکریٹری سندھ اور وزیر اعلیٰ سندھ کو نوٹس جاری کرتے ہوئے طلب کرلیا ہے۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *