FIA نے پنڈی زون کو اسلام سے ہٹا کر لاہور میں ضم کردیا،اٹک جہلم چکوال کے شہریوں کیلئے شدید مسائل

رپورٹ: شہزاد ملک

ایف آئی اے اسلام آباد زون سے ملحق راولپنڈی ڈویژن کو وفاقی تحقیاتی ادارے نے انتظامی فیصلہ کرتے ہوئے لاہور زون 2 کے ساتھ ضم کر دیا،جس سے راولپنڈی، اٹک ،جہلم ،چکوال دوسرے علاقوں کی عوام میں شدید تشویش اور غم و غصے کی لہر دوڑ گئی ہے ،

گزشتہ دنوں وفاقی تحقیقاتی ادارے نے انتظامی طور پر یہ فیصلہ کیا ہے کہ اسلام آباد زون میں شامل راولپنڈی ڈویژن کو لاہور زون 2 کے ساتھ ضم کر دیا جائے جبکہ اسکے علاوہ پنجاب میں بہاولپور ، سرگودھا جبکہ خیبر پختو نخواہ ہیں مالا کنڈ اور بنوں اور سندھ میں اور بلوچستان میں بھی نئے زون بنائے گئے لیکن حیرت کی بات یہ ہے کہ اسلام آباد کے ساتھ جڑواں شہر راولپنڈی کو کیوں لاہور زون کے ساتھ لگا دیا گیا ہے جبکہ اس کی وجہ کیا ہے یہ جاننے کے لئے عوام پریشان ہیں .

ذرائع ایف آئی اے بھی اس فیصلے پر حیران ہیں کہ جن وجوہات اور عوام کی وجہ سے یہ فیصلہ کیا گیاہے کہ راولپنڈی جیسے ڈویژن کو اسلام آباد زون سے ہٹا کر لاہور زون میں شامل کر دیا گیا کیونکہ اگر کوئی ساہل اٹک شہر سے اسلام آباد زون میں درخواست دینے آئے تو وہ ایک گھنٹے میں اسلام آباد زونل آفس میں پہنچ سکتا ہے .

جبکہ اسی طرح راولپنڈی سے تقریباً آدھا گھنٹہ چکوال سے تقریباً 2 گھنٹے جہلم سے لگ بھگ ڈیڑھ گھنٹے میں لوگ اسلام آباد زونل آفس میں پہنچ سکتے ہیں لیکن انہی لوگوں کو اگر لاہور جانا پڑا تو یہ انہتائی مشکل ہو گا لیکن اس وقت ایف آئی اے جن مسائل کا سامنا کر رہی ہے ان میں سب سے بڑا مسئلہ اس وقت اسٹاف کا ہے جبکہ ملک بھر کے تمام زونز اور سب زونز میں اس وقت لگ بھگ 70 فیصد اسٹاف کی کمی ہے جبکہ ایئرپورٹ ایمپگر یشن اسٹاف میں تو صورتحال اس سے بھی زیادہ خوفناک ہے .

تا ہم یہاں پر بات ضروری اہمیت کی حاصل ہے کہ پنڈی کو لاہور زون میں شامل کرنے کے علاوہ جتنے انتظامی فیصلے کیے گئے وہ بلاشبہ انتہائی ضروری تھے اور اس میں سائلین کو انتہائی فائدہ ہو گا پنڈی ڈویژن کو لاہور ذون 2 میں شامل ہونے کے حوالے سے ہم نے جب بات کی لاہور زون 2 کے ڈائریکٹر طارق چوہان سے تو انہوں نے کہا کہ سینئرز نے جو فیصلہ کیا ہے ہمارے لئے قابل قبول ہے لیکن اسٹاف کی شدید کمی ہے اگر ساتھ اسٹاف بھی مل جائے تو بہت اچھا ہو گا لیکن فل وقت اسٹاف کی کمی پوری ہوتی نظر نہیں آ رہی ہے پنڈی ڈویژن کو لاہور زون میں شامل کرنے سے وفاقی تحقیقاتی ادارے کو کیا فائدہ ہو گا .

عوام کو اس انتظامی فیصلے سے کیا سہولت ملے گی یہ سوال جب ہم نے ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرل ایف آئی اے احسان صادق سے پوچھا تو انہوں نے کہا کہ انتظامی طور پر ملک بھر میں زونز عوام کی سہولت کے لئے بنائے گئے ہیں لیکن واقعی یہ بات درست ہے کہ پنڈی ڈویژن کے لاہور ذون سے منسلک ہونے سے عوام کو تکلیف ہو گی جبکہ ہم نے اس فیصلے کو اس ہفتے میں دوبارہ غور کے لئے ایجنڈے میں رکھ لیا ہے جبکہ قومی امکان یہی ہے کہ راولپنڈی زون کو دوبارہ واپس اسلام آباد زون کے ساتھ بحال کر دیا جائے گا .

ایڈیشنل ڈی جی ایف آئی اے احسان صادق نے مزید بتایا کہ جب ہم نے ےیہ فیصلہ کیا تھا اس وقت یہ مسائل ہمارے زیر غور نہیں آئے لیکن فیصلہ ہونے کے بعد یہ مسائل اور دوسرے اہم پہلو ڈائریکٹر اسلام آباد فخر سلطان ہمارے سامنے لائیں ہیں اور ہم اس بات کی قائل ہو گئے ہیں کہ یہ فیصلہ دوبارہ اجلاس میں ہی ہو گا کہ اس کو واپس کرنا ہے یا اسی طرح ضم ہی رہنے دینا ہے .

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *