سندھ ہائی کورٹ نے پرائیویٹ اسکولوں کو 5 فیصد سے زائد فیس وصول کرنے سے روک دیا

سندھ ہائی کورٹ کے لارجر بینچ نے پرائیویٹ اسکولوں کو 5 فیصد سے زائد فیس وصول کرنے سے روک دیا، سندھ ہائی کورٹ نے 5 فیصد سے زائد اسکول فیس کو غیر قانونی قرار دے دیا،

پرائیویٹ اسکولوں کی جانب سے من مانے فیس وصول کرنے کیخلاف والدین کی درخواستوں پر محفوظ کیا جانے والا فیصلہ سنادیا گیا سندھ ہائی کورٹ کے لارجر بینچ نے پرائیویٹ اسکولوں کو 5 فیصد سے زائد فیس وصول کرنے سے روک دیا عدالتی فیصلہ کے مطابق پرائیویٹ اسکولوں کے مالکان 5 فیصد سے زائد اسکول فیس وصول کرنے کے اہل نہیں ہونگے والدین کے وکلاء کی جانب سے کہا گیا کہ کہ سپریم کورٹ بھی قرار دے چکی کہ یہ منافع بخش کاروبار کے زمرے میں آتا ہے ریاست کو کاروباری اصول واضح کرنے اور ناجائز منافع روکنے کا اختیار حاصل ہے سماعت کے بعد والدین نے میڈیا سے گفتگو میں کہا کہ ہمارے حق میں فیصلہ آنے سے ہمارے بچے اپنی تعلیم جاری سکھ سکیں گیں

سندھ ہائی کورٹ کے حکم کے بعد والدین کی خوشیاں بھی تھم نہ سکی واضح رہے اس سے قبل بھی سندھ ہائی کورٹ کے دو رکنی بینچ نے والدین کے حق میں فیصلہ دیا جس کے بعد لارجر بینچ نے اس حکم برقرار رکھا

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *