کیپ کے فنڈز ہڑپ کرنے کی تیاری

سندھ پروفیسرز اینڈ لیکچررز ایسوسی ایشن کے مرکزی صدر پروفیسر فیروز الدین صدیقی، پروفیسر سید علی مرتضیٰ، پروفیسر کریم ناریجو، پروفیسر عامر الحق، پروفیسر منور عباس، پروفیسر عزیز اللہ میمن، پروفیسر حسن بلوچ، پروفیسر غلام رسول لاکھو، پروفیسر صالح عباس و دیگررہنمائوں نے ایک مشترکہ بیان میں کیپ فنڈز کے متوقع ناجائز استعمال کی شدید مذمت کی ہے اور کہا ہے کہ ان فنڈز کو طلباء کی فلاح و بہبود میں استعمال کرنے کے بجائے دفتری مقاصد کے لئے صرف کرنے کا منصوبہ بنایا جا رہا ہے، جو کہ کراچی کے کالج کے طلباء کے ساتھ سراسر زیادتی ہے۔

کیپ کے ذریعے ہونے والے داخلوں کے داخلہ فا رم اور کلیم فارم سے حاصل شدہ تقریبا ایک کروڑ سے زائد روپے کی رقم پر کراچی کے طلباء کے حق ہے جسے دفتری ضروریات پوری کرنے کے لئے استعمال میں لانا ان فنڈز کو خرد برد کرنے کے مترادف ہے، اس لئے سندھ پروفیسر ز اینڈ لیکچررز ایسوسی ایشن داخلہ کمیٹی کے ایسے کسی بھی ممکنہ اقدام کی مذمت کرتی ہے ۔ ایسی تمام کو ششوں کو ناکام بنایا جا ئے گا ۔ لہذٰا وزیر اعلیٰ سندھ اور سیکریٹری تعلیم سے اپیل کی جاتی ہے کہ وہ اس معاملے پر فوری توجہ دیں اور اس فنڈ کو دفاتر کی تزئین و آرائش کے بجائے طلباء کی فلاح و بہبود کے لئے استعمال کرنے سے متعلق تمام ممکنہ اقدامات کریں ۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *