عمران اسماعیل نے گورنر سندھ کے عہدے کا حلف اٹھالیا

تحریک انصاف کے رہنما عمران اسماعیل نے گو رنر سندھ کے عہدے کا حلف اٹھالیاہے۔گورنر ہاؤس کراچی میں ہونے والی تقریب حلف برداری میں سندھ ہائیکورٹ کے چیف جسٹس احمد علی شیخ نے اس سے حلف لیا۔

تقریب میں وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ ،صوبائی وزراء ،غیر ملکی سفارت کاروں اور دیگر اہم شخصیات نے شرکت کی۔

حلف اٹھانے کے بعد عمران اسماعیل سندھ کے 33ویں گورنر بن گئے ہیں ،ان سے قبل اس عہدے پر ن لیگ کے محمد زبیر اپنی ذمہ داریاں نبھارہے تھے۔

گورنر سندھ کا حلف اٹھانے سے قبل عمران اسماعیل نے سندھ اسمبلی کی رکنیت چھوڑ دی،انہوں نے اپنا استعفیٰ اسپیکر سندھ اسمبلی کے نام بھیجا، خرم شیر زمان نے سیکریٹری اسمبلی کے دفتر میں جمع کرایا۔

عمران اسماعیل کا کہنا ہے کہ گورنر کے عہدے کا حلف اٹھانے کے بعد وہ گورنر ہاؤ س میں رہائش اختیار نہیں کریں گے بلکہ اپنے ذاتی گھر میں ہی رہیں گے اور گورنر ہاؤس کے صرف دفتر کو استعمال کریں گے۔

عمران اسماعیل نے حالیہ عام انتخابات میں پاکستان پیپلزپارٹی کے نامزد امیدوار بیرسٹر مرتضیٰ وہاب کو حلقہ پی ایس -111 میں شکست دی تھی تاہم انہوں نے صوبائی اسمبلی کی رکنیت کا حلف نہیں اٹھایا تھا۔

عمران خان نے 12 اگست 2018 کو عمران اسماعیل کو گورنر سندھ نامزد کرنے کا اعلان کیا تھا۔ 24 اگست کو پی ٹی آئی رہنما کی بطور گورنر سندھ نامزدگی کا نوٹی فکیشن جاری کردیا گیا تھا جس کے بعد انہوں نے انتخابات میں جیتی گئی نشست سے استعفی دے دیا تھا۔

عمران اسماعیل یکم جنوری 1966 کو کراچی میں پیدا ہوئے۔ 52 سال کی عمر میں انہیں گورنر سندھ کی ذمہ داریاں تفویض کی گئیں۔

صوبہ سندھ میں سب سے زیادہ مدت تک گورنر رہنے کا اعزاز ڈاکٹر عشرت العباد کو حاصل ہے جو 14 برس تک اس منصب پر فائز رہے۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *