حکومتی پیکج میں 2 لاکھ نجی اسکولوں کے 20 لاکھ اساتذہ کا حصہ کیوں نہیں ؟

الرٹ نیوز : وزیر اعظم عمران خان نے 1 لاکھ 72 ہزار سے زائد نجی اسکولوں کے 20 لاکھ اساتذہ کیلئے پیکج میں کوئی اعلان نہیں کیا ، اگر حکومت نے مدد نہ کی تو کرونا کا یہ اژدھا  ہزاروں  نجی اسکولوں کو نگل جائے گا ۔

پاکستان پرائیویٹ اسکولز ایسوسی ایشن کے چئیرمین پرویز ہارون نے مرکزی کابینہ کی مشاورت کے بعد وزیر اعظم عمران خان سے درخواست کی ہے کہ وہ ملک بھر میں قائم 173,110  نجی اسکولوں جن میں تقریبا ً 20 لاکھ سے زائد اساتذہ برسر روزگار ہیں ، اِن میں سے نصف سے زائد اسکول کرائے کی عمارتوں میں ہیں ،جن کی ماہانہ فیس 1000 روپے سے لیکر 3000 کے درمیان ہے، اور آپ کے اقتصادی پیکچ میں ان تمام اسکولوں کو بالکل ہی نظر انداز کر دیا گیا ہے۔

ہم وزیر اعظم سے اپیل کرتے ہیں کہ وہ کوئی امداد نہ دیں، صرف اتنا کر دیں کہ  آسان شرائظ پر اُن تمام اسکولز کو کم از کم 4 ماہ کی ٹوٹل  فیس کلیکشن کے برابر قومی بینکوں سے آسان شرائط پر ، اُس حلقے کے MPA یا MNA  کی شخصی ضمانت پر 24 ماہ کے لئے قرضہ دلوا دیں۔

جیسا کہ آپ کے علم میں ہے کہ تعلیمی اداروں پر اس وقت تالا لگا ہوا ہے ، والدین سے آفس کھول کر فیس بھی وصول نہیں کی جا سکتی اور  جون میں اسکولز کُھلنے کے بعد بھی  والدین کی معاشی پوزیشن ایسی نہیں ہو گی کے وہ 4 ماہ کی فیس ایک ساتھ ادا کرسکیں اور نئی کلاسز کے لئے کورس بھی خرید سکیں ، نہ ہی اسکولز اساتذہ کو ایک ساتھ تنخواہیں دینے کی پوزیشن میں ہو نگے۔

جس وقت بھی قوم کو ضرورت پڑی نجی تعلیمی اداروں کے طالب علم، اساتذہ اور مالکان نے دل کھول کر اْن کی مدد کی ہے چاہے وہ 2005 کا زلزلہ ہو یا 2010 کا سیلاب ، آج یہ نجی اسکولز اپنے وزیر اعظم کی طرف اس وقت ایک اُمید سے دیکھ رہے ہیں کہ مشکل کی اس گھڑی میں اُن کو فراموش نہ کیا جائے۔

آپ کے اس اقدام سے ہزاروں اسکول بند ہونے سے اور لاکھوں اساتذہ بے روزگار ہونے سے بچ جائیں گے۔ اس وڈیو لنک کے ذریعے اس مشاورتی اجلاس میں صدر انور علی بھٹی ، محمد انور، عالم شیر اعوان ، انجینئر عبدالرحمن ،  عابد حسین ، شکیل احمد ، ساجد حسین ، مزمل شاہ ، مغفور نجیب ، محمد عارفین ، شکیل احمد خان ، ڈاکٹر ذوالفقار، محمد فاروق ، واجد حسین ، اعجازالدین، صادق ادریس ، ڈاکٹر عمران اور دیگر مرکزی عہدیداروں نے شرکت کی۔

معلوم رہے کہ سندھ کے نجی اسکولوں کی سب سے بڑی تنظیم پاکستان پرائیویٹ اسکول ایسوسی ایشن ہے جس کا قیام حال ہی ہوا ہے جو نجی اسکولوں کی بہتری ، طلباء کے روشن مسقتبل اور والدین کو کم فیس میں‌ زیادہ سہولیات کے خواہاں ہیں .

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں