گولیمار، لالوکھیت ، ناگن چورنگی ، خاموش ، مچھراور گیڈر کالونی کیسی بنیں ؟

رپورٹ : شعیب بھٹی

کراچی کے بعض علاقوں کے نام ہی سن کو انسان کو خوف لاحق ہو جاتا ہے کہ سامنے والا نام لے رہا ہے یا دھمکی دے رہا ہے ، جیسا کہ آپ نے کسی سے ایڈریس پوچھا اور اس نے کہا گولی مار پہلی بار سننے والے کو عجیب خوف محسوس ہوتا ہے ، ان علاقوں‌ کے نام کیسے اور کب پڑے درج ذیل رپورٹ میں‌ مختصر پڑھیئے .

گولی مار
گولیمار میں پولیس کا نشانے بازی کا سینٹر تھا ، اس نسبت سے اس علاقے کو گولی مار کہا جانے لگا ۔

لالو کھیت
لالو نامی ایک ہندو کی متروکہ زمین پر آبادی ہوئی تو لالو کھیت کہلایا ۔ بعد ازاں لیاقت علی خان سے منصوب کر کے لیاقت آباد کر دیا گیا ۔

لانڈھی
لانڈھی سندھی زبان میں چھپڑا نما جھونپڑی کو کہتے ہیں ، جو یہاں قیام پاکستان سے قبل موجود تھیں ۔ اس لئے لانڈھی ، لانڈھی مشہور ہو گیا .

ملیر
ملیر صدیوں سے قائم یہ علاقہ زرخیز ہے اور صدیوں سے ملیر ہی کہلاتا آ رہا ہے۔

قائد آباد
قائد آباد جہاں مزارِ قائد ہے ، یہاں ہندوستان سے آئے ہزاروں مہاجرین کی جھگیاں آباد تھیں ، قائد کی تدفین کے لئے موجودہ جگہ کا انتخاب ہوا تو یہاں آباد ہزاروں جھگی نشینوں کو متبادل جگہ فراہم کی گئی اور اس طرح قائدآباد نام پڑ گیا ۔

نیو کراچی
نیو کراچی میں پاکستانی دارالحکومت کے دفاتر اور سرکاری ملازمین کی رہائش کے لئے پلاننگ کی گئی تھی ، جو بعد ازاں دارالحکومت اسلام آباد بن جانے کی وجہ سے بد نظمی کا شکار ہو گیا ۔تاہم اس کے باوجود اس جگہ کو نیو کراچی کہا جانے لگا .

ناگن چورنگی
ناگن چورنگی سندھ بورڈ آف روینیو کی زمینوں میں سے ایک چھوٹی سی زمین تھی ، سب سے چھوٹے قطع زمین کو دیہہ کہتے ہیں ، دیہہ کی جمع دیہات کلہلاتا ہے ۔ اس دیہہ کا نام ناگن تھا ،اسی مناسبت سے ناگن چورنگی کہلایا ، اسی طرح سرجانی ، تائیسر ، ہلکانی ، سونگل، گجرو ، وغیرہ یہ سب دیہاتوں کے نام ہیں۔ آج کل ناگن چورنگی سپاہ صحابہ کا مرکز ہونے کی وجہ سے شہرت رکھتی ہے .

خاموش کالونی ، قبرستان کی جگہ پر کچی آبادی قئم ہوگئی اس لئے خاموش کالونی کہلائی ۔

صدر
صدرعربی زبان کا لفظ ہیں ، اس کی جمع صدور ہے ، صدر سینے ( CHEST) کو بھی کہتے ہیں ،جہاں دل ہوتا ہے ۔ اس لئے سب سے اہم جگہ ہونے کی مناسبت سے صدر کہلایا ۔ امریکہ میں ایسی جگہ کو Down Town کہتے ہیں۔ یہی وجہ ہے اب شہری انتظامیہ نے کراچی میں‌ واپس ڈائون ٹائون وغیرہ کے بورڈ بھی آویزاں کردیئے ہیں .

پاپوش نگر
پاپوش نگر کسی زمانے میں جوتوں اور چپلوں کی بہت بڑی مارکیٹ تھی ، اسی مناسبت سے پاپوش نگر کہلایا ،

عائشہ منزل
فیڈرل بی ایریا جب آباد ہونا شروع ہوا تو چورنگی کا نام و نشان تک نہیں تھا ، صرف ایک گھر بنا ہوا تھا جس پر عائشہ منزل کی نیم پلیٹ لگی ہوئی تھی ، لوگوں اور بس والوں نے اسٹاپ کی پہچان کے لئے عائشہ منزل کہنا شروع کردیا ۔ عائشہ منزل کا وہ گھر مدر کیئر ہاسپٹل سے دو گھر کے فاصلے پر اب بھی موجود ہے ۔

کریم آباد
کریم آباد آغا خانیوں کی کالونی اور عبادت خانہ وقوع پذیر ہونے کی وجہ سے پرنس کریم آغا خان کے نام پر کریم آباد کہلایا ۔

اورنگی ٹاون
1960 کی دہائی میں اقوامِ متحدہ نے دنیا بھر میں دو ماڈل ٹاون بنانے کے لئے کراچی اور کیپ ٹاون کا انتخاب کیا اور ماڈل ٹاونز کا نام اورنگی ٹاون رکھا اسی دوران ملکی حالات خراب ہوتے چلے گئے ، پھر 71ء کی جنگ کے بعد مشرقی پاکستانیوں کو وہاں بسا دیا گیا اس طرح یہ ماڈل پروجیکٹ بدنظی کا شکار ہو گیا اور رہی سہی کثر قبضہ مافیا نے پوری کردی ۔

سولجر بازار
برطانوی افواج کی اشیائے خوردونوش کے لئے مارکیٹ بنائی گئی تھی ، اسی مناست سے سولجر بازار پڑا۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *