ٹرانس جینڈر بل پر کالعدم تحریک طالبان پاکستان کا موقف سامنے آ گیا

ٹرانس جینڈر ایکٹ کی منظوری پر کالعدم تحریک طالبان پاکستان کا موقف سامنے آ گیا ۔ پاک سر زمین پر مغرب کے وفاداروں اور ان کے وظیفوں پر پلنے والے خائنین سیکولر عناصر نے بل منظور کیا ہے ۔

ترجمان کالعدم تحریک طالبان محمد خراسانی نے بیان حاری کیا ہے کہ پاکستان میں پارلیمنٹ سے اس بل کے منظور ہونے سے دنیا بھر کے مسلمانوں کے دلوں کو ٹھیس پہنچی ہے ۔

انہوں نے متعدد آیات قرآنی اور احادیث کا حوالہ مع ترجمع دینے کے بعد ہم پارلیمنٹ کے تمام غیر اسلامی فیصلوں کے ساتھ ساتھ اس فیصلے کو بھی مسترد کرتن ہیں ۔اور برات کا اعلان کرتے ہیں ۔اور مسلمانان پاکستان پر واضح کرتے ہیں کہ آپ پر باہر سے مسلط شدہ حکمرانوں نے پھر ثابت کر دیا کہ امت مسلمہ کے خیر خواہ نہیں ہیں ۔

مذید پڑھیں :گاڑیوں پر داتا صاحب کا بورڈ لگا کر سواریاں گامے شاہ اتارنے والے ڈرائیور کون ؟

بلکہ یہ ائمہ الکفر کے اشاروں اور مشوروں پر چلنے والے وفادار غلام اور ان کے مذموم مقاصد کو پورا کرنے کیلئے برسر پیکار ہیں ۔ہم پاکستان کے مسلمانوں کو یہ پیغام دینا چاہتے ہیں کہ یہ مغربی تہذیب کے پیداوار صرف خوشنما نعروں اور احتجاجوں سے باز نہیں آتے ۔ باطل کی بدمعاشی باتوں سے کبھی کم نہیں ہو گی ۔ اس کے لیئے غیرت ‛ حمیت ‛ زندہ احساس اور جانوں کے نذرانوں کی ضرورت ہوتی ہے ۔

آپ پر مسلط پارلیمنٹ ‛ حکمران اور دیگر مقننہ کو اسلام کی فکر ہے نہ مسلمانوں کی تہذیب کی فکر ہے ۔نہ ہی مسلمانوں کی دل آزاری سے یہ باز آتے ہیں ۔لہذاہ ان کا بائیکاٹ کریں ۔ان کا قطع تعلق کریں اور ان کو ووٹ نہ دیں ۔