شہریوں کو بیرون ملک بھیجنے والا جعلی افسر FIA کے ہاتھوں گرفتار

کراچی : ایف آئی اے کا انسپکٹر بن کر سرکاری اداروں میں ملازمت ،رہائشی و کمرشل پلاٹوں کو واگزار کرنے ، بیرون ملک بھیجنے کے نام پر شہریوں سے کروڑوں روپے وصول کرنے والے کو ایف آئی اے اینٹی ہیومن ٹریفکنگ سرکل لاہور نے ساتھی سمیت گرفتار کر لیا ۔

تفصیلات کے مطابق ایف آئی اے اینٹی ہیومن ٹریفکنگ سرکل لاہور نے ملک ساجد عرف محمد ساجد ولد خدا بخش اور عندلیب ساجد کو گرفتار کرلیا ہے ، جس کے خلاف مقدمہ الزام نمبر 264/2022 درج کرلیا ہے ۔

ایف آئی اے کے مطابق ملزمان نے شہریوں کو کویت ملازمت کے لئے ویزہ دینے کے نام پر 12 لاکھ سے زائد رقم وصول کر کے مفرور ہو گئے تھے ۔

مزید پڑھیں : اعلی سیاسی شخصیت کے فرنٹ مین علی حسن بروہی کیخلاف منی لانڈرنگ کی ایک اور انکوائری شروع

ایف آئی اے کا کہنا ہے کہ ملزم ساجد کے خلاف لاہور ،روالپنڈی ،کراچی سمیت دیگر شہروں میں سرکاری اداروں میں ملازمت ،سرکاری زمینوں پر قبضے کے ساتھ زمینوں کو واگزار کرانے کے نام پر شہریوں سے کروڑوں روپے وصول کرنے کی شکایات موجود ہیں اور ملزم اپنے آپ کو ایف آئی اے انسپکٹر ظاہر کرتا رہا ہے جس کے لئے جعلی کارڈ بھی بنوا رکھا تھا ۔

تاہم ملزم ایف آئی اے سمیت دیگر قانون نافذ کرنے والے اداروں کی گرفت میں نہیں آرہا تھا ۔ایف آئی اے اینٹی ہیومن ٹریفکنگ سرکل لاہور کی ٹیم نے اتوار کی شام ملزم کو اس کے ساتھی سمیت گرفتار کیا ہے ۔