پاکستان میں مفاد پرست سیاست دانوں کی وجہ سے جمہوریت کمزور ہوئی : مولانا فضل الرحمن

کراچی : جمعیت علمائے اسلام کے مرکزی امیر اور پی ڈی ایم کے سربراہ مولانا فضل الرحمان اتوار کو سندھ کے چار روزہ دورے پر کراچی پہنچے، کراچی ایئر پورٹ پر جمعیت علمائے اسلام کے رہنماؤں مولانا راشد محمود سومرو، مولانا عبدالکریم عابد، قاری محمد عثمان، مولانا محمد غیاث ، مولانا سمیع الحق سواتی و دیگر نے ان کا استقبال کیا۔

بعد ازاں مولانا فضل الرحمان نے مقامی ہوٹل میں بلوچستان نیشنل پارٹی کے بانی سردار عطاء اللہ مینگل مرحوم کی یاد میں تعزیتی ریفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ سردار عطاء اللہ خان کے تعزیتی ریفرنس میں شریک ہونے آیا ہوں ،سردار عطاء اللہ مینگل مرحوم کی میرے والد سے پرانی رفاقت تھی ، میں آج بھی کہتا ہوں پاکستان میں جمہوریت مسلسل کمزور ہوئی ہے کیوں کے ہم سیاست دان مفاد پرست واقع ہوئے ہیں ۔

ہمیں اپنی غلطیوں کی طرف بھی دیکھنا ہو گا ، دنیا میں جبر کی بنیاد پر حکومتیں قائم ہوتی رہی ہیں ۔ پاکستان ہمارا ملک ہے ، پاکستان کا آئین چار ستونوں پر کھڑ ا ہے ۔ یہ ملک اسلامی ہے اور آئین سازی میں قرآن و سنت کو ملحوظ خاطر رکھا گیا ہے ۔ مملکتی نظام میں عوام کی شراکت آئین میں موجود ہے ۔یہ ملک وفاقی ہے جس میں چار یونٹ ہیں۔

مذید پڑھیں : خبردار ! مرزائیوں نے Shezan کی جگہ PRAN کمپنی متعارف کرا دی

انہوں نے کہا کہ چوتھا ستون پارلیمنٹ کی بالا دستی اور آئین سازی عوام کے منتخب نمائندے کریں گے ۔ مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ آج پاکستان کی تاریخ کے سب سے بڑے حکمران اتحاد کو سر جوڑ کے بیٹھنا ہو گا ۔ سی پیک کے منصوبے کے وقت کچھ حالات ایسے تھے جس کی وجہ سے مجھے چائنا جانا پڑا ۔

چائنا کے حکمرانوں نے کہا کے اتنے بڑے منصوبے کی تکمیل کیسے ہو گی ، ملک میں دہشت گردی بد امنی ہے، جو سی پیک کا حامی ہے وہ امریکہ کا دشمن اور مخالف ان کا دوست ہے ۔ ہم انڈیا کے ساتھ تجارتی تعلق بنائیں تو ملکی مفاد سامنے ہوتا ہے ۔ ایران اور افغانستان کے ساتھ تحارتی تعلقات ہونے چاہئیں ۔

انہوں نے کہا کہ ایران ہمارا پڑوسی ملک ہے اس پر بھی نظر رکھی جا رہی ہے ۔ ایران اور پاکستان کے بہتر تعلقات کی بات کی جاتی ہے اور اجازت بھی نہیں ۔ ریاست کو دو چیزوں کی ضرورت ہے ، دنیا جہاں میں انسانوں کے تحفظ کے لئے قانون بنتے ہیں۔ انسانوں کے تحفظ کے لئے قانون بنائے جاتے ہیں ، ہم غلط پالیسیاں بناتے ہیں تو پھر سزا ملتی ہے ۔

دریں اثناء جے یو آئی سندھ کے ڈپٹی سیکریٹری اطلاعات مولانا سمیع الحق سواتی کے مطابق پی ڈی ایم کے سربراہ مولانا فضل الرحمان پیر کے روز سندھ کے سیلاب سے متاثرہ اضلاع کے دورے کی غرض سے کراچی سے سکھر روانہ ہو جائیں گے ، مولانا فضل الرحمان اپنے دورہ سندھ کے پہلے مرحلے میں سکھر پہنچیں گے بعد ازاں شکار پور لاڑکانہ کے مختلف علاقوں کا بھی دورہ کریں گے اور جے یو آئی سندھ کی ریلیف سرگرمیوں اور متاثرین سلیاب کیمپس کا دورہ بھی کریں گے۔