کے پی سی ، صحافیوں کیخلاف مسلسل انتقامی کاروائیوں کی سخت مذمت کرتے ہیں

کراچی ( ) کراچی پریس کلب نے صحافیوں کے خلاف مسلسل انتقامی کاروائیوں کی سخت الفاظ میں مذمت کی ہے۔

کراچی پریس کلب کے عہدیداروں نے پریس کلب کے ممبران طحہٰ عبیدی اور فیاض یونس کو ایک سابق پولیس کی جانب سے ہراساں کرنے اور دھمکیاں دینے کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے ۔

مزید پڑھیں: اینٹی باٸیوٹیک کا غلط استعمال، ایکس ڈی آر کیسز میں اضافہ

اپنے جاری بیان میں کراچی پریس کلب کے عہدیداروں نے کہا کہ واٹس ایپ کے گروپ میں محض ایک تحریر شیئر کرنے پر صحافیوں کو سنگین نتائج کی دھمکیاں دینا ذہنی پسماندگی کا ثبوت ہے ۔

انہوں نے کہا کہ صحافیوں کا حقائق سے عوام کو باخبر رکھنا ہے اگر اس حوالے سے کسی کے ذاتی مفادات کو کوئی نقصان پہنچتا ہے تو صحافی اس کے ذمہ دار نہیں ہیں ۔

انہوںنے کہا کہ طحہٰ عبیدی اور فیاض یونس کومختلف نمبروں سے دھمکی آمیز کالز کرکے ہراساں کی جارہا ہے ۔کراچی پریس کلب اس کی بھرپور مذمت کرتا ہے ۔انہوں نے کہا کہ اگر کسی کو ان صحافیوں کے ساتھ کوئی مسئلہ ہے تو وہ قانون راستہ اختیار کرے ۔

مزید پڑھیں:پاکستان اور نیدرلینڈز کی ون ڈے سیریز میں شاہین کو آرام دینے کا فیصلہ

انہوں نے وزیراعلیٰ سندھ ،وزیر اطلاعات سندھ شرجیل انعام میمن ،آئی جی سندھ اور ڈی آئی جی سکھر سے مطالبہ کیا کہ وہ طحہٰ عبیدی اور فیاض یونس کو ایک سابق پولیس کی جانب سے دی جانے والی دھمکیوں کا نوٹس لیں اور معاملات کی شفاف انداز میں انکوائری کروائی جائے ۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *