سشمیتا سے شادی کی خبریں، للت مودی بھارتی میڈیا پر برس پڑے

بالی وڈ اداکارہ سشمیتا سین سے شادی پر وضاحت کے باوجود جعلی خبریں سامنے آنے پر انڈین پریمیئر لیگ (آئی پی ایل) کے بانی و پہلے چیئرمین للت مودی بھارتی میڈیا پر برس پڑے۔

انسٹاگرام پر للت مودی نے ایک طویل پوسٹ کی جس میں درج تھا کہ’ مجھے سمجھ نہیں آتا کہ میڈیا کو مجھے ٹرول کرنے کا اتنا جنون کیوں ہے، کوئی بتا سکتا ہے کہ میں نے انسٹا پر صرف 2 تصویریں پوسٹ کی اور ٹیگ بھی صحیح استعمال کیا لیکن مجھے لگتا ہے کہ ہم آج بھی قرون وسطیٰ میں جی رہے ہیں، جہاں دو لوگ دوست نہیں ہو سکتے، ان کے درمیان کیمسٹری اچھی ہو اور وقت بھی مناسب ہو تو کوئی معجزہ بھی ہو سکتا ہے‘۔

انھوں نے لکھا کہ ’ہمارے ملک میں ہر صحافی ارناب گوسوامی کی طرح بہترین بننے کی کوشش کر رہا ہے لیکن میرا مشورہ ہے کہ جیو اور جینے دو، صحیح خبریں دو نہ کہ ڈونلڈ ٹرمپ کے اسٹائل میں جھوٹی خبریں دو‘۔

 

View this post on Instagram

 

A post shared by Lalit Modi (@lalitkmodi)

للت مودی نے پوسٹ میں اپنی سابقہ اہلیہ اور ان سے متعلق چلنے والی خبروں کو بھی جھوٹا قرار دیااور لکھا کہ اگر کوئی ترقی کر رہا ہے تو اسے سراہیں کیوں کہ وہ اپنے ملک کے لیے کر رہا ہے، آپ سب مجھے مفرور کہہ رہے ہیں تو یہ بتائیں کہ کس عدالت نے مجھے مفرور قرار دیا؟

انھوں نے خود سے متعلق لگائے جانے والے الزامات کے جواب میں لکھا کہ ’میں ایک سونے کا چمچ منہ میں لے کر پیدا ہوا تھا، میں نے کبھی رشوت نہیں لی اور نہ ہی اس کی ضرورت پڑی، جب میں نے بی سی سی آئی میں شمولیت اختیار کی تو میرے پاس 40 کروڑ تھے اور جب مجھ پر پابندی لگائی گئی تھی تو بینک میں 47 کروڑ تھے، جعلی میڈیا شرم کرو‘۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *