ورلڈ ہیلتھ اسمبلی کا اجلاس سویٹزرلینڈ کے شہر میں جنیوا میں جاری ھے

اسلام آباد() ترجمان وزارتِ صحت نے کہا ھے پاکستان کے وفاقی وزیر صحت عبدالقادر پٹیل۔کی ایرانی وزیرصحت اینڈ میڈیکل ایجوکیشن ڈاکٹر بہرام عین اللہی سے ملاقات کی ھے ۔

اس موقع پر وفاقی وزیر صحت عبدالقادر پٹیل نے کہا ھے پاکستان اور ایران دیرینہ برادرانہ تعلقات سے مستفید ہو رھے ہیں دونوں برادر ممالک میں موجود تاریخی رشتے کے تناظر میں دوطرفہ تعاون کو مزیز بڑھانے پر اتفاق ہوا ھے دونوں وزرائے نے صحت کے مختلف شعبوں میں باہمی تعاون کے فروغ پر اتفاق کیا گیا ھے۔

مزید پڑھیں: شیخ رشید احمد کا پی ٹی آئی لانگ مارچ سے قبل اہم بیان

انہوں نے مزیز کہا صحت کے شعبوں میں دونوں ملکوں کی عوام کے مفاد کیلئے کام کرنے پر اتفاق پر زور دیا گیا ھے اجلاس میں فیصلہ ہوا ھے دونوں ملکوں کے درمیان ایک مشترکہ ورکنگ گروپ تشکیل دیا ھے ۔ پاکستان کی جانب سے ڈی جی ہیلتھ اور ایران کی جانب سے وزیر صحت کے خصوصی معاون فوکل پرسن ہوں گے دونوں اطراف متعدی امراض پر قابو پانے کیلئے سرحد پار تعاون بڑھانے پر اتفاق ہوا ھے ۔

عبدالقادر پٹیل نے کہا کرونا وائرس کی وبا کے دوران دونوں ممالک میں دو طرفہ تعاون کیلئے اقدامات اٹھاے گئے دونوں ممالک صحت عامہ کے عالمی امور و مسایل پر یکساں موقف رکھتے ہیں صحت عامہ کا عالمی تحفظ دونوں ممالک کا کلیدی مقصد اور مشن ھے عبدالقادر پٹیل ایران نے صحت کے شعبے میں خاص طور پر صحت کی نگہداشت کی سروسز میں بہتری کے حوالے سے شاندار اصلاحات کیں ہیں ۔

مزید پڑھیں: پی ٹی آئی رہنما سے ملے اسلحے کی حقیقت کیا؟ اہم شخصیات کے بیان میں تضاد

ایران نے صحت انشورنس کوریج میں توسیع کا قابل ستائش کام کیا ھے وزیر صحت نے کہا قومی صحت کی نظاموں کی مضبوطی کیلئے بین الاقوامی تعاون اور معاونت میں اضافہ وقت کی ضرورت ھے ۔

دونوں ممالک کا صحت کے شعبے میں تحقیق اور تکنیکی معاونت کے تعاون کو بڑھانے پر بھی اتفاق ھے دونوں ممالک کو ایمرو کے رکن ممالک کے ساتھ ملکر کام کرنا چاہیے ہمیں عالمی ادارہ صحت کے عالمی ترقی کے ایجنڈا میں صحت کے فروغ کو اولین ترجیحات میں رکھتے ہوے اقدامات کو یقینی بنانا ہو گا۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *