عید الفطر کے موقع پر قیدیوں کی 90 روز کی خصوصی سزا معافی

عید الفطر کے موقع پر قیدیوں کی 90 روز کی خصوصی سزا معافی

اسلام آباد: عید الفطر کے موقع پر قیدیوں کی 90 روز کی خصوصی سزا معاف کرنے سے متعلق وزارت داخلہ نے صوبوں کو مراسلہ جاری کردیا۔

وزارت داخلہ نے خط پنجاب، سندھ، خیبر پختون، بلوچستان اور گلگت بلتستان کے ہوم ڈیپارٹمنٹ کو تحریر کیا۔ صدر پاکستان کے اختیارات آرٹیکل 45 کے تحت ملک بھر کی جیلوں کے قیدیوں کو 90 روز تک کی سزا معافی دی جائے۔

مراسلہ کے مطابق 90 روز کی سزا معافی کی پالیسی کا اطلاق عمر قید کے ملزمان پر بھی ہوگا۔ جبکہ سزا کا ایک تہائی حصہ مکمل کرنے والے 65 سال سے زائد مرد، اور 60 سال سے زائد خاتون قیدیوں پر پالیسی کا اطلاق ہوگا۔

اور ایک تہائی سزا مکمل کرنے والے 18 سال سے کم عمر ملزمان پر بھی سزا معافی کا اطلاق ہوگا۔ تاہم ملک سے غداری، ریاست مخالف اقدامات، فرقہ واریت کے ملزمان پر سزا معافی کا اطلاق نہیں ہوگا۔

اسی طرح مالی فراڈ اور قومی خزانہ کو نقصان پہنچانے والے مختلف جرائم میں قید ملزمان پر پالیسی کا اطلاق بھی نہیں ہوگا۔ وزارت داخلہ نے فوری طور پر سزا معافی کی پالیسی پر عملدرآمد کرنے کی ہدایات جاری کیں۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *