سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی میں رشوت اصولی کا بڑا نیٹ ورک بےنقاب

کراچی : ڈائریکٹر جنرل سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی سلیم رضا کھوڑو نے ڈسٹرکٹ ایسٹ ڈیڑھ کروڑ روپے ماہانہ پٹہ سسٹم پر دے دیا۔ ڈسٹرکٹ ایسٹ میں تعینات راشی آفیسرز عاصم انصاری، وقار ہاشمی، نیاز لغاری، عرفان سومرو خوشی سے نڈھال قومی خزانہ کروڑوں روپوں کی آمدنی سے محروم شہریوں کی جمع پونجی رقم ڈوبنے کا خدشہ۔ذرائع کے مطابق اسسٹنٹ ڈائریکٹر محمد عاصم انصاری عرف (کبڑا عاشق) اسسٹنٹ ڈائریکٹر نیاز لغاری، اسسٹنٹ ڈائریکٹر عرفان سومرو اور اسسٹنٹ ڈائریکٹر وقار ہاشمی بلڈر مافیا سے غیر قانونی تعمیرات کی مد میں کروڑوں روپے رشوت وصول کر رہے ہیں۔

ڈسٹرکٹ ایسٹ میں واقع جمشد ٹاؤن میں متذکرہ بالا دلال نما آفیسرز اور ان کے سرپرست اعلی کرپٹ ڈائریکٹر جنرل سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی سلیم رضا کھوڑو کی سرپرستی میں بغیر نقشے اور بغیر کسی اپرول کے سینکڑوں رہائشی پلاٹ پر کمرشل فلیٹ/یونٹس/پورشن نما غیر قانونی تعمیرات جاری ھیں واضع رہے کہ ڈائریکٹر جنرل سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی سلیم رضا کھوڑو نے پیسوں کی ہوس میں سپریم کورٹ آف پاکستان کے احکامات بھی نظر انداز کر دیئے۔

ڈسٹرکٹ ایسٹ کے ایریا میں واقع جمشید ٹاؤن کے ایریا جمشید کوارٹر میں پلاٹ نمبر JM-444، پلاٹ نمبر JM- 411، پلاٹ نمبر JM-70/A، پلاٹ نمبر JM-448، پلاٹ نمبر JM-1047، پلاٹ نمبر JM-488، پلاٹ نمبر JM-242، پلاٹ نمبر JM-759، پلاٹ نمبر JM-757 جبکہ جمشید ٹاؤن کے ایریا میں ہی واقع پی ای سی ایچ ایس میں
بلاک نمبر 6 پلاٹ نمبر 91-H یونٹس/فلیٹ ( B+G+2 )
بلاک نمبر 6 پلاٹ نمبر 92-F یونٹس (B+G+1)
بلاک نمبر 2 پلاٹ نمبر 921-E فلیٹ/یونٹس ( G+M+3)
بلاک نمبر 2 پلاٹ نمبر 879-E فلیٹ/یونٹس ( G+4)
بلاک نمبر 2 پلاٹ نمبر 128-E فلیٹ/یونٹس ( G+2)
بلاک نمبر 2 پلاٹ نمبر D-120 پر 3rd فلور
بلاک نمبر 2 پلاٹ نمبر E-105 پر 3rd فلور
بلاک نمبر 2 پلاٹ نمبر 47-D پر ( G+3)
بلاک نمبر 2 پلاٹ نمبر 47-I پر (G+3)
بلاک نمبر 2 پلاٹ نمبر 121-K پر (G+2)
بلاک نمبر 2 پلاٹ نمبر 118-O پر (G+2)
بلاک نمبر 2 پلاٹ نمبر 112-F پر (G+2)
(کے اے ای سی ایچ ایس)
کراچی ایڈمن سوسایٹی کے بلاک نمبر 3 میں
پلاٹ نمبر 3/B-260 پر ( G+3)
پلاٹ نمبر 3/B-179 پر ( G+3)
بلاک نمبر 7 میں
پلاٹ نمبر A-424/7 (G+3)
پلاٹ نمبر A-297/7 ( G+3)
پلاٹ نمبر A-415/7 ( G+3)
پلاٹ نمبر A-415/7 (G+3)
پلاٹ نمبر A-416/7 (G+3)
پلاٹ نمبر A-297/7 (G+3)
جبکہ سی پی برار سوسایٹی کے بلاک نمبر 7,8 پلاٹ نمبر 154 پر ( G+2)
سی پی برار سوسایٹی کے بلاک نمبر 7,8 کے پلاٹ نمبر 345 پر ( G+2)
آدم جی نگر کے بلاک نمبر 7,8 پلاٹ نمبر B-278 پر (G+3)
سی پی برار سوسایٹی بلاک نمبر 7,8 کے پلاٹ نمبر 120 پر (G+2)
سی پی برار سوسایٹی بلاک نمبر 7,8 کے پلاٹ نمبر 346 پر (G+2)
دادا بھائی کواپریٹو سوسایٹی میں پلاٹ نمبر A-5 پر (G+3)
دادا بھائی کواپریٹو سوسایٹی پلاٹ نمبر A-1/1 پر (G+3)
کراچی ایڈمن سوسایٹی میں بلاک نمبر 5 کے پلاٹ نمبر B-154 پر (G+1)
کراچی ایڈمن سوسایٹی میں بلاک نمبر 2 کے پلاٹ نمبر C-99 پر (G+2)
کراچی ایڈمن سوسایٹی کے بلاک نمبر 8 میں پلاٹ نمبر A-243 پر (G+2) سمیت سینکڑوں غیر قانونی تعمیرات جاری ہیں جہاں سے متذکرہ بالا راشی افسران بلڈر مافیا سے کروڑوں روپے ماہانہ رشوت وصول کر رہے ہیں،
غیر قانونی تعمیرات کا بزنس کرنے والے ڈائریکٹر جنرل سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی سلیم رضا کھوڑو عاصم انصاری عرف کبڑا عاشق، نیاز لغاری، عرفان سومرو اور وقار ہاشمی سمیت پٹہ سسٹم میں ملوث دیگر دلالوں کے کالے کرتوتوں کی مزید تفصیلات جاری ہیں،

اختیارات کا ناجائز استعمال کر کے ڈسٹرکٹ ایسٹ کو پٹہ سسٹم پر ماہانہ ڈیڑھ کروڑ میں بیچنے والے کرپٹ ڈائریکٹر جنرل سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی سلیم رضا کھوڑو کے ڈسٹرکٹ ایسٹ کے ایریا گلشن ٹاؤن میں تعینات مایہ ناز پیدا گیر اسسٹنٹ ڈائریکٹر طارق مگسی، اسسٹنٹ ڈائریکٹر اسد، سینئر بلڈنگ انسپکٹر الطاف حسین کھوکھر، بلڈنگ انسپکٹر علی مہدی جعفری، بلڈنگ انسپکٹر ریاض جکھورا، بلڈنگ انسپکٹر راحیل، نجم قریشی اور شہزاد رضا سیال غیر قانونی تعمیرات کی مد میں بلڈر مافیا سے کروڑوں روپے رشوت وصول کر رہے ہیں جبکہ قومی خزانہ ماہانہ کروڑوں روپوں کی آمدنی سے محروم ہو رہا ہے۔

ڈسٹرکٹ ایسٹ میں واقع گلشن ٹاؤن میں متذکرہ بالا دلال نما آفیسرز اور ان کے سرپرست اعلی کرپٹ ڈائریکٹر جنرل سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی سلیم رضا کھوڑو کی سرپرستی میں بغیر نقشے اور بغیر کسی اپرول کے سینکڑوں رہائشی پلاٹ پر کمرشل فلیٹ/یونٹس/پورشن نما سینکڑوں غیر قانونی تعمیرات جاری ہیں۔

ڈسٹرکٹ ایسٹ کے ایریا میں واقع گلشن ٹاؤن کے بلاک نمبر 13-A میں پلاٹ نمبر A-1/115، پلاٹ نمبر A-9، پلاٹ نمبر A-8، جبکہ بلاک نمبر 13-D کے پلاٹ نمبر C-24 اور پلاٹ نمبر A-90 اسی طرح بلاک نمبر 13-D/1 کے پلاٹ نمبر A-64، پلاٹ نمبر A-80 اور پلاٹ نمبر A-46، بلاک نمبر 13-D/2 کے پلاٹ نمبر A-7 بلاک نمبر 13-C میں پلاٹ نمبر A-82 اور بلاک نمبر 1 میں پلاٹ نمبر A-255 اور پلاٹ نمبر A-356،
گلشن ٹاؤن میں ہی واقع گلستان جوہر کے پوش ایریا بلاک نمبر 2 میں پلاٹ نمبر B-52 بلاک نمبر 3 میں پلاٹ نمبر B-125، پلاٹ نمبر B-131 اور بلاک نمبر 14 میں پلاٹ نمبر B-154 بلاک نمبر 11 میں پلاٹ نمبر B-121، پلاٹ نمبر B-97، پلاٹ نمبر B-173,174، پلاٹ نمبر C-13,14 قبل ازیں گلشن ٹاؤن میں ہی واقع پی آئی بی کالونی میں پلاٹ نمبر 2247، پلاٹ نمبر 1057,1058، پلاٹ نمبر 763,764، پلاٹ نمبر 1152، پلاٹ نمبر 1032، پلاٹ نمبر 2280، پلاٹ نمبر J-33، پلاٹ نمبر J-98 اور پلاٹ نمبر 897 جبکہ اسکیم 33 گلزار ہجری سیکٹر 18A کوئٹہ ٹاؤن میں پلاٹ نمبر B-40، پلاٹ نمبر 74 اور پلاٹ نمبر A-1/68 سمیت سینکڑوں غیر قانونی تعمیرات جاری ہیں جہاں سے متذکرہ بالا راشی افسران بلڈر مافیا سے کروڑوں روپے ماہانہ رشوت وصول کر رہے ہیں۔

غیر قانونی تعمیرات کا بزنس کرنے والے ڈائریکٹر جنرل سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی سلیم رضا کھوڑو کے پٹہ سسٹم میں ملوث دیگر دلالوں کے کالے کرتوتوں کی مزید تفصیلات جاری ہیں۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *

Exit mobile version