اسلام قبول کرنے کے حوالے نئی قانون سازی کو ہر فورم پر نامنظور کریں گے، رؤف تنولی

اسلام قبول کرنے کے حوالے سے موجودہ اسمبلی میں ایک ناجائز قانون پاس کروانے کیلیۓ کوشاں حکومت وقت اور اپوزیشن کے اس متنازعہ عمل کی شدید الفاظ میں مزمت کرتے ہیں۔ اقتدار کے نشے میں مست حکمرانوں کو اپنی منمانی نہیں کرنیں دیں گے۔ نئے بل کی منظوری کو ہر فورم پر عوام نامنظور کریں گے، یہ محض دنیاوی مسئلہ نہیں بلکہ دین اسلام پر ایک خفیہ وار ہے۔

ان خیالات کا اظہار ہزارہ یوتھ لیگ پاکستان کے رہنما ملک رؤف تنولی نےکیا۔ انہوں نے کہا کہ ان یہود کے چیلوں حکمرانوں نے اس ملک پاک کا نقشہ ہی بدلنے کی ٹھان رکھی ہے۔عوام ایسی فرعونیت پر ہر فورم پر احتجاج کریں۔

مزید پڑھیں: سندھ بھرمیں مارکیٹیں رات 10بجےتک کھولنےکی اجازت

انہوں نے کہا کہ اس بل کی شرعی حیثیت بالکل صفر ہے کیونکہ اس کے پا س ہونے کی صورت میں مسلمان حکومت یہ تسلیم کرے گی کہ سید الاولین والآخرین امام الانبیاء والمتقین حضرت محمد مصطفیٰ ﷺ نے بھی ( نعوذ باللہ) یہ جرم کیا کیونکہ سید نا علی رضی اللہ عنہ نے جب اسلام قبول کیا ان کی عمر محض 10 سال تھی۔اور جلیل القدر صحابہ و صحابیات نے کم عمری میں اسلام قبول کیا تھا۔

ملک رؤف تنولی نے کہا کہ یہ بل دراصل توہین رسالت ، توہین اہل بیت اور توہین صحابہ اور توہین اسلام پر مبنی ہے۔ ایسے بل لانے والے اور پاس کرنے والے یاد رکھیں، بہت سے اسلام دشمن آئے جنھوں نے اس چراغ کو بجھانے کی کوشش کی لیکن خود مٹ گئے اور اسلام باقی ہے یہ بھی مٹ جائیں گے اور اسلام باقی رہے گا ان شآء اللہ

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *