جامع مسجد، جو ہانسبرگ (جنوبی افریقہ)

یہ مسجد نہ صرف ملک جنوبی افریقہ بلکہ خطۂ جنوبی افریقہ کی ایک خوبصورت مسجد ہے۔ اس مسجد کے دروازے (فروری 2013ء) سے نماز کے لیے کھول دیے گئے ۔ یہ مسجد جو ہانسبرگ شہر کے ایک مشہور مسلمان تاجر 74 سالہ علی کاتروگلو کی سوچ کا حاصل ہے علی ترکی سے کاروبار کے لیے جو ہانسبرگ میں مقیم ہوئے تھے۔ بعد میں ان کا کاروباراتنا پھلا پھولا کہ انھوں نے امریکہ میں ایک مسجد تمیر کرنے کا عزم کیا لیکن ان کے ایک دوست نے مشورہ دیا کہ وہ یہ مسجد جنوبی افریقہ میں ہی تعمیر کروائے۔ انھوں نے ترکی طرزِ تعمیر سے استنبول کی مسجد سلیمانی کے نمونے پر یہ مسجد تعمیر کروائی۔ مسجد کا افتتاح ہونے سے قبل ہی یہ نہ صرف مقامی باشندوں بلکہ غیر ملکی سیاحوں کی توجہ کا مرکز بن چکی تھی۔ روزانہ 500 کے لگ بھگ لوگ اس مسجد کود یکھنے آتے رہے جن میں دس فیصد تعداد صرف غیرمسلموں کی ہوتی۔ غیر مسلم اسلام کی شان وشوکت کو دیکھ کر نہ صرف مرعوب بلکہ دنگ رہ جاتے ہیں۔ اس مسجد کا ایک مرکزی گنبد اور چار مینار ہیں۔ مسجد کے میناروں کی بلندی 180 فٹ ہے۔مسجد کے اندر خوبصورت رنگوں سے آراستہ قرآنی آیات تحریر کی گئی ہیں۔ دیواروں پر اتنے خوبصورت نقش و نگار بنائے گئے ہیں کہ آنکھیں حیران رہ جاتی ہیں۔ مسجد کے کمپلیکس میں سکول بھی بنایا گیا ہے جو 850 طالب علموں کے لیے ہے۔ اس مسجد کے امام ابراہیم عطا جامعہ الازہر کے گریجوایٹ ہیں اور انھوں نے اس سے قبل امریکہ میں پٹس برگ کی ایک مسجد میں بھی امامت کے فرائض انجام دیے۔ اس کے علاوہ البانیہ میں ایک سکول کے پرنسپل بھی رہ چکے ہیں۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *