شاہی قلعہ دلچسپ معلومات (قسط نمبر 5)

قلعہ کے اندر واقع حماموں کے مشرق میں اینٹوں سے بنا ہوا ایک چبوترہ ہے۔ اس سے ذرا نیچے آئیں تو ایک اور خوبصورت عمارت آپ کا استقبال کرتی ہے یہ احاطہ جہانگیری‘‘ ہے۔ یہ عمارت بھی جیسا کہ نام سے ظاہر ہے مغل بادشاہ نورالذین محمد جہانگیر نے تعمیر کرائی تھی۔ اس کے اندر مشرق اور مغرب میں کمروں کی قطاریں ہیں ۔ستون بریکٹ ( دیواروں میں نصب کرنے والی الماری) اشہتیر (چھت کی بڑی کڑی جس پر چھوٹی کڑیاں رکھی جاتی ہیں اور چھبے ( چھت کے آگے بڑھے ہوئے ہوۓ جو بارش اور دھوپ سے حفاظت کے لیے ہوتے ہیں سرخ رنگ کے پتھروں سے تعمیر کیے گئے ہیں ۔ اس عمارت کے بعض ستون مربع نما شکل کے ہیں جن پر ہاتھیوں، شیروں اور پرندوں کی خوبصورت تصویریں بنائی گئی ہیں ۔’’احاطہ جہانگیری‘‘ کے جنوب میں آپ کو ایک اور وسیع وعریض چبوتر انظر آئے گا جس پر ایک عمارت بنی ہوئی ہے۔ یہ عمارت بھی مغل بادشاہ نور الدین محمد جہانگیر کی خواب گاہ ہوا کرتی تھی ۔ اب یہاں شاہی قلعے کا عجائب گھر قائم ہے ۔اس عمارت کے برآمدے میں پیتل کی توپیں رکھی ہیں جو امیر شیرعلی خان شاہ افغان کی فرمائش پر بنائی گئی تھیں اور ہر توپ پر آپ کو شیر کا چہرہ کندہ نظر آۓ گا۔ عجائب گھر کی عمارت تین کمروں پرمشتمل ہے ۔مشرقی سمت میں واقع کمرے میں نقشے اور تصویریں رکھی گئی ہیں جبکہ دیگر دو کمروں میں شیشے کی الماریوں کے اندر مغلیہ دور میں استعمال کیے جانے والے مختلف اقسام کے ہتھیار رکھے ہوۓ ہیں جن میں تلواریں خنجر چھرے زرہیں پستول بندوقیں وغیرہ شال ہیں۔ لاہور کے مشہور زمانہ’شاہی قلعہ کے بارے میں ہم نے بہت سی معلومات آپ کو فراہم کر دی ہیں ۔ اب آپ ہمیں بتائے کہ اس عظیم الشان تاریخی یادگار دیکھنے کے لیے آپ کب لاہور جار ہے ہیں؟

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *