پولیس انتظامیہ کا خاتون افسر کے خلاف ہتک آمیز رویہ قابل مذمت ہے، ملک صفدراعوان

کراچی : تھانہ ٹیپو سلطان کی خاتون افسر انسپکٹر شرافت خان کو چند روز قبل بیماری کی رخصت کے دوران معطل کر کے ہیڈ آفس رپورٹ کرنے کا حکم جاری کیا تھا ۔ انسپکٹر شرافت خان کی تعیناتی کے دوران علاقے میں منشیات فروشی سمیت دیگر جرائم میں نمایاں کمی واقع ہوئی تھی ‛جس کے باوجود محمکے کی جانب سے ان کا تبادلہ کر کے منشیات فروشیوں کو کھلی چھوٹ دی گئی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے انسپکٹر شرافت خان کے تبادلے کے دوران وہ بوجوہ تھانے میں موجود نہیں تھیں جس کے باوجود نئے تعینات ہونے والے ایس ایچ او نے خاتون ہونے کے باوجود ان کا سامان باہر پھینکنے کی دھمکی دلوائی اور ان کا سامان باہر کر دیا جب کہ انسپکٹر شرافت خان نے انہیں کچھ دیر رکنے کیلئے درخواست بھی کی تاہم اس کے باوجود سامان باہر کر دیا ۔

اس حوالے سے سماجی رہنما ملک صفدر اعوان کا کہنا ہے کہ اعلی پولیس انتظامیہ نے خاتون افسر کے خلاف ہتک آمیز رویہ روا رکھا ہے جس کی بھرپور مذمت کرتے ہیں اور اعلی پولیس افسران سے اپیل کرتے ہیں کہ وہ خاتون افسر کی نیک نامی و شہرت کو خراب کرنے والوں کیخلاف سخت کارروائی عمل میں لائیں ۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *