وفاقی حکومت کا تعلیمی اداروں میں چھٹیاں مزید نہ بڑھانے کا فیصلہ

اسلام آباد : بین الصوبائی وزرا ئے تعلیم کانفرنس نے تعلیمی اداروں میں چھٹیاں نہ بڑھانے کا فیصلہ کیا ہے۔تفصیلات کے مطابق کورونا وائرس کی تباہ کاریاں جاری ہیں، موذی وائرس نے جہاں دنیا کے دیگر شعبوں کو متاثر کیا ہے وہی تعلیم کا شعبہ بھی عالمی وبا کے باعث متاثر ہوا ہے۔ کورونا کی پہلی، دوسری اور تیسری لہر کے بعد اب چوتھی لہر نے پنجے گاڑھ دیئے ہیں۔

خدشہ ظاہر کیا جارہاہے کہ اس چوتھی لہر کے باعث بچوں کے متاثر ہونے کا امکان ہے۔ اس حوالے سے پنجاب کے تعلیمی ادارے مزید ایک ماہ تک بند رکھنے کی تجویز آئی تھی۔موسم گرما کی چھٹیوں کے معاملے پر بین الصوبائی وزرا ئے تعلیم کانفرنس طلب کی گئی تھی۔آج چھٹیوں کے بعد تعلیمی ادارے کھولنے سے متلعق اجلاس ہوا جس کی صدارت وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود نے کی۔

مزید پڑھیں: سندھ، کورونا کیسز میں اضافہ، حکومت کا کراچی میں مکمل لاک ڈاون پر غور

کانفرنس میں موسم گرما کی چھٹیوں کو 14 اگست تک بڑھانے کی تجویز پرغور کیا گیا۔تاہم اجلاس میں مشاورت کے بعد چھٹیاں نہ بڑھانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔اجلاس میں فیصلہ کیا گیا ہے کہ کورونا ایس او پیز کے تحت سکول شیڈول کے مطابق کھولے جائیں گے۔ بورڈ امتحان شیڈول کے مطابق جاری رہیں گے،چھٹیاں مزید نہیں بڑھائی جائیں گی۔اجلاس میں اتفاق کیا گیا کہ کورونا شرح کے مطابق صوبے خود فیصلے کریں گے۔

خیال رہے کہ اس سے قبل بتایا گیا تھا کہ نیا تعلیمی سال یکم اگست کی بجائے یکم ستمبر سے شروع کرنے کی تجویز پیش کی گئی تھی ۔ اہم فیصلے نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کے آئنندہ ہونے والے اجلاس میں کئے جائیں گے جبکہ این سی او سی اجلاس ایک سیدو روز میں بلوایا جاسکتاہے۔ واضح رہے تعلیمی اداروں میں موسم گرما کی تعطیلات یکم جولائی سے یکم اگست تک ہیں. صوبائی وزیرتعلیم ڈاکٹر مراد راس نے ٹوئٹر پر اپنے پیغام میں سکولوں میں گرمی کی چھٹیوں کا اعلان کیا تھا، ان کا کہنا تھا کہ پنجاب بھر کے تمام سکولزگرمی کی چھٹیوں کے سلسلے میں یکم جولائی سے یکم اگست تک بند رہیں گے۔وزیر تعلیم نے ہدایت کی تھی کہ تمام بچے چھٹیوں کے دوران کورونا ایس او پیز کا خیال رکھیں۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *