ایچ ای سی کا دو سالہ گریجویشن پروگرام ایک سال مزید بڑھانے کا فیصلہ خوش آئند ہے، محمد ظفریارخان

محمد ظفر یار خان

کراچی : ٹائم اسکیل گروپ کے چیئر مین محمد ظفر یا ر خا ن اراکین جہا ں آ را، منیر عا لم خا ن ، ڈاکٹر محمد طیب ، عمران خا ن، محمد کاشف ، ڈاکٹر نوید الرب،غلا م محمد، محمود سلطان، شا زیہ قادر ، عدنا ن خان ،مشکور حسین خاصخیلی، یا سمین صدیقی ، ضیا ءخلجی ، شاہد علی خان،اقبا ل شیخ، عظمی وقا ر،مسرت جہاں، سیدمحمدحسنین،محمد شعیب، محمد نعیم ،نثار احمد،تو صیف احمد ، کو کب بشیر، ڈاکٹر رضوانہ صدیقی ، عبدالرشیداور عا مر سیال نے ایچ ای سی کی جا نب دو سا لہ گریجویشن(بی اے، بی ایس سی، بی کام ) پروگرام کو مزید ایک سا ل بڑ ھا نے کے فیصلے کا خیر مقدم کیا ہے اورآج ایچ ای سی کی جانب سے اس کا با قا عدہ نو ٹیفیکیشن جا ری کر دیا ہے ۔ہم ایچ ای سی کے اس فیصلے کو ٹا ئم اسکیل گروپ اورجوائنٹ ایکشن کمیٹی کے اصولی موقف کی فتح قرار دیتے ہیں۔

یا د رہے کہ2 جو لا ئی کو ملک بھر کی جامعات کے وائس چانسلرز اور ایگزیکیٹو ڈائریکٹر ایچ ای سی کے مشترکہ اجلاس میں ملک بھر کی جامعات اور کالجوں میں دو سالہ ایسوسی ایٹ ڈگری اور چار سالہ بی ایس گریجویشن پروگرام کو موقر کرنے کا فیصلہ کیا گیا تھا۔

ٹائم اسکیل گروپ کے اراکین نے کہا کہ ایچ ای سی نے زمینی حقائق کو دیکھتے ہو ئے درست فیصلہ کرکے جا معہ کراچی کے الحا ق شدہ کالجوں کے طلباءکو ذہنی اذیت سے چھٹکارا دلوا دیا ہے۔

ٹائم اسکیل گروپ کے اراکین نے کہا کہ ہما را پہلے دن سے یہی موقف ہے کہ جب تک الحا ق شدہ کا لجزمیں چا ر سا لہ بی ایس پروگرام کی تیا ری مکمل نہیں ہو جا تی اس وقت تک الحاق شدہ کالجز کو بی اے، بی ایس سی، بی کام کو جا ری رکھنے کی اجا زت دی جا ئے۔ٹا ئم اسکیل گروپ کے اراکین نے کہا کہ وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر خالد محمود عراقی کی زیرصدارت اکیڈمک کونسل پہلے ہی متفقہ طور پر دوسالہ گریجویشن (بی اے، بی ایس سی، بی کام ) پروگرام میں داخلے دینے کا فیصلہ کر چکی ہے۔

ٹائم اسکیل گروپ کے اراکین نے کہا کہ ایچ ای سی کے اس فیصلے میں جامعہ کراچی کے وائس چانسلر اوراکیڈمک کونسل کے تقریباً تما م ممبران کا کردار انتہا ئی قابل تعریف رہا مگر سپلا کا نام استعمال کر نے والے چنداشخاص نے ایچ ای سی کے دوسالہ گریجویشن کے فیصلے پر بھر پورمنفی پروپیگنڈامہم چلا ئی اور اکیڈمک کونسل میں اس گروپ کے ایک ممبر صا حب نے تو اس فیصلے کو جعلی قرار دے کر ایک موقر روزنا مے کی خبرپر اوردوسالہ گریجویشن کے خلا ف ایک خط تحریر کر دیا اور اس کی ایک کا پی سپلا کرا چی ریجن کے صدر کو بھی ارسال کر دی جس کا کو ئی وجود ہی نہیں ہے۔انتہا ئی افسوس کا مقا م ہے کہ اتنی اہم پوسٹ پر موجود ہونے کے با وجود انھیں اس با ت کا علم ہی نہیں کہ گذشتہ کئی سا لوں سے سپلا کی کو ئی منتخب با ڈی سرے سے موجود ہی نہیں اوراس وقت سپلا کے تما م اختیا رات ، صوبائی اسسٹنٹ رجسٹرار جوائنٹ اسٹاک کمپنی جہانگیر میمن کے پاس ہیں جواس وقت سپلا کے ایڈمنسٹریٹر ہیں اور وہ سند ھ ہائی کورٹ کے فیصلے کے مطابق سپلا کے انتخا با ت کروانے کے عمل میں مصروف ہیں۔

ٹائم اسکیل گروپ کے اراکین نے کہا کہ گذشتہ کئی ما ہ سے سپلا کا نام استعما ل کر کے چند نام نہا د افراد نے مخصوص افراد کے ایجنڈے کی تکمیل کے لیے وائس چانسلر،اکیڈمک کونسل کے ممبران اور دو سالہ گریجویشن کے خلاف جو منفی پروپیگنڈا کیا ،ایچ ای سی کے آج کے فیصلے نے سپلا کے ان نام نہا د ٹھکیداروں کو بے نقا ب کردیا۔

ٹائم اسکیل گروپ کے اراکین نے کہا کہ دوسالہ گریجویشن کی بحا لی کے لیے انجمن اسا تذہ جا معہ کراچی کے صدر پروفیسرڈاکٹر شاہ علی القدر ،ڈاکٹر ایس ایم طحہ، ڈاکٹر ریاض احمد، ڈاکٹر اسامہ شفیق،ڈاکٹر محسن علی ،پروفیسر عتیق، ڈاکٹر انتخاب الفت ،جا معہ کراچی کی اکیڈمیک کو نسل کے ممبر پروفیسر نعیم خالد،پروفیسر اقبا ل خان، ڈیموکریٹک یوتھ الائنس کی نغمہ اقتداراور دیگر نے عملی جدوجہدکر کے اپنا بھرپورکردار ادا کیا جس کے لیے یہ تما م افرادمبا رک با د کے مستحق ہیں۔

ٹائم اسکیل گروپ کے اراکین جامعہ کراچی کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر خالد محمود عراقی سے مطا لبہ کرتے ہیں کہ وہ اس فیصلے کے بعدفوری طور پر الحاق شدہ کالجز کے لیے بی اے، بی ایس سی، بی کام کے داخلوں کی تا ریخ کا اعلا ن کر یں تا کہ سا ل 2020 کے انٹر میڈیٹ پا س ہزاروں طلباء کے تعلیمی نقصان ازلہ کیا جا سکے۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *