بجٹ میں ضلع دیامر کو نظرانداز کرنے کیخلاف زیرو پوائنٹ پر احتجاجی دھرنا

جے یو آئی کراچی

چلاس ( پ ر ) حالیہ بجٹ میں ضلع دیامر کو یکسر نظرانداز کرنے کے خلاف زیرو پوائنٹ پرکل ہونے والے احتجاجی دھرنے کے حوالے سے جمعیت علماء اسلام ضلع دیامر کا ایک ہنگامی اجلاس امیر مفتی عبدالرحمن کے زیر صدارت رائل سٹی ہوٹل چلاس میں منعقد ہوا ۔ اجلاس کا باقاعدہ آغاز ضلعی سیکرٹری اطلاعات قاری غلام اللہ کے تلاوت کلام پاک سے ہوا۔ اجلاس کی کارروائی ضلعی جنرل سیکرٹری بشیر احمد قریشی نے کی۔

اجلاس میں ضلعی امیر مفتی عبدالرحمن، جے یو آئی گلگت بلتستان کے نائب امیر مفتی ولی الرحمان، نائب امیر جے یو آئی جی بی مولانا عبدالرحمن، سیکرٹری اطلاعات جے یو آئی ضلع دیامر قاری غلام اللہ، حاجی بختیار، مولانا نصراللہ، مفتی شاہ خالد، مولانا محیط، مولانا آدم شاہ، حافظ وقار اور مولانا اسحاق نے شرکت کی ۔

مزید پڑھیں: منزل جدا جدا

اجلاس میں کل ہونے والے دھرنے کے حوالے سے حکمت عملی ترتیب دی گئی۔اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے جمعیت علماء اسلام گلگت بلتستان کے ڈپٹی جنرل سیکرٹری و ضلعی جنرل سیکرٹری بشیر احمد قریشی نے کہا کہ جمعیت علماء اسلام اس وقت ملک پاکستان کی سب سے فعال سیاسی جماعت ہے اور اس وقت اپوزیشن کی سب سے مضبوط جماعت سمجھی جاتی ہے ۔

انہوں نے کہا کہ موجودہ وقت میں جے یو آئی ضلع دیامر کی واحد نمائندہ جماعت بن کر ابھری ہے اس لئے ہمارا فرض بنتا ہے کہ ہم عوام کے اعتماد پر پوا اتریں ۔ انہوں نے مزید کہا کہ حالیہ صوبائی بجٹ میں اپوزیشن کو دیوار سے لگانے کی کوشش کی گئی ہے اور خصوصاً ضلع دیامر کے بجٹ پر خنجر چلایا گیا ہے جسے کسی طور برداشت نہیں کیا جاسکتا ہے ۔

بشیر احمد قریشی نے کہا کہ ضلع دیامر کے ساتھ کئے جانے والے ناروا سلوک پر خاموش نہیں رہنگے اور کل زیرو پوائنٹ پر بھرپور احتجاجی دھرنا ہوگا اور اس وقت تک چین سے نہیں بیٹھ ینگے جب تک دیامر کو اس کا حق نہیں ملتا۔انہوں نے کہا کہ جی بی اسمبلی میں پیش کئے گئے بجٹ کو مسترد کرتے ہیں۔

مزید پڑھیں: ہاکی ورلڈ کپ کے ہیرو نوید عالم کینسر کے ہاتھوں زندگی کی بازی ہارگئے

اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے جے یو آئی کے سابق امیدوار اور نائب امیر جے یوآئی جی بی مفتی ولی الرحمان نے کہا کہ بھرپور احتجاجی دھرنا کرنے کی ضرورت ہے اور اس دھرنے میں پی ٹی آئی کے سوا تمام امیدواروں کو شرکت کر کے آواز اٹھانی چاہئے ۔

انہوں نے کہا کہ انشاء اللہ احتجاج کامیاب بنا کر اپنے حقوق لے کر دم لینگے۔اجلاس سے گفتگو کرتے ہوئے ضلعی امیر مفتی عبدالرحمن نے پچھلے دنوں ورکر کنونشن بابوسر میں جے یو آئی میں شامل ہونے والے تمام احباب کو مبارکباد دی اور کہا کہ کل کے دھرنے میں تمام ساتھی بھرپور شرکت کریں ۔

اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے مولانا نصراللہ نے کہا کہ دھرنے میں دیگر اپوزیشن جماعتوں کو بھی دعوت ہے یہ صرف جے یو آئی کا مسئلہ نہیں پورے ضلع کے حقوق کا مسئلہ ہے لہذا عام عوام کو بھی بڑھ چڑھ کر حصہ لینا چاہئے ۔ اجلاس کو مخاطب کر کے مولانا عبدالہادی نے کہا کہ بجٹ میں ضلع دیامر کے حقوق پر ڈھاکہ ڈالا گیا ہے جسے کسی طور برداشت نہیں کیا جا سکتا۔

مزید پڑھیں: ایف پی سی سی آئی، کے سی سی آئی، پائما کا بجٹ اناملیز دور کرنے کے لیے مشترکہ جدوجہد کا فیصلہ

قاری غلام اللہ نے کہا کہ دیامر کے حقوق کے لئے جنگ لڑنا باعث سعادت ہے تمام سیاسی پارٹیوں کو مل کر دیامر کے حق کے لئے آواز اٹھانی چاہئے ۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ کل بروز بدھ بعد نماز، ظہر زیرو پوائنٹ میں احتجاجی دھرنے کا آغاز کیا جائے گا ۔ جے یو آئی نے اپیل کی کہ اپنے حقوق کی پہرہ داری کے لئے دیامر کے عوام اٹھ کھڑے ہوں اور کل پھرپور طریقے سے احتجاجی دھرنے میں شرکت کریں۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *