ڈاکٹر اشرف جلالی کا علامہ عطا محمد بندیالوی کی دینی خدمات کو خراج تحسین

اشرف جلالی

لاہور : تحریک لبیک یا رسول اللہ صلی اللہ علیک وسلم اور تحریک صراط مستقیم کے زیر اہتمام مرکز صراط مستقیم تاج باغ لاہور میں استاذ الکل، تاجور کشور تدریس حضرت علامہ عطا محمد بندیالوی قدس سرہٗ العزیز کی دینی خدمات کو خراج تحسین پیش کرنے کے لیے ”امام بندیالوی قدس سرہٗ العزیز سیمینار“ کا انعقاد کیا گیا۔ سیمینار کی صدارت حافظ محمد قمر رضا مدنی نے کی۔

سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے تحریک لبیک یا رسول اللہ صلی اللہ علیک وسلم کے سربراہ ڈاکٹر محمد اشرف آصف جلالی نے کہا: استاذ الکل حضرت امام بندیالوی قدس سرہٗ العزیز نے اپنے 70 سالہ دورِ تدریس میں ہزاروں علماء تیار کیے۔ آپ کی تدریس نے مدارس دینیہ میں ایک انقلاب برپا کیا۔ آپ ایسے امام المدرسین تھے کہ آپ کے عہد میں اور بعد میں آپ کے پائے کا قرآن و سنت کے علوم کا کوئی مدرس میسر نہیں آ سکا۔ اہل سنت کے تمام مدارس میں سے شاید کوئی ایسی درسگاہ نہیں ہوگی جس میں آپ کے تلامذہ یا تلامذہ کے تلامذہ یا تلامذہ کے تلامذہ کے تلامذہ بطور مدرس، صدر مدرس، مفتی اور شیخ الحدیث موجود نہ ہوں۔ آپ بندیالوی انداز تدریس کے بانی قرار پائے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ آپ کے انداز تدریس کا کمال یہ تھا کہ کند ذہن سے کند ذہن شخص بھی دوران کلاس ہی سبق یاد کر لیتا تھا۔ آپ صرف منطق و فلسفہ کے ہی امام نہیں تھے بلکہ علوم نقلیہ میں بھی منفرد مقام کے حامل تھے۔ آپ ایک طالب علم میں علوم و فنون کی مشکل سے مشکل عربی عبارات کو سمجھنے اور نہایت گہرائی میں اترنے کی صلاحیت بیدار کر دیتے تھے۔ اسی وجہ سے آپ کے تلامذہ میں بڑے بڑے محقق، محدث، فقیہ، مفکر، دانشور اور لیڈر تیار ہوئے۔ آپ نے تدریس علوم دینیہ کے ساتھ قیام پاکستان سمیت مختلف دینی اور ملی تحریکوں میں بھرپور حصہ لیا۔ بندہ ناچیز محمد اشرف آصف جلالی کو آپ کی ضعیف العمری میں جامعہ محمدیہ نوریہ رضویہ بھکھی شریف میں تین سال تک بھرپور شرف تلمذ حاصل رہا۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *