جامعہ بنوریہ نے ایشین کراٹے چیمپیئن کھلاڑیوں کو اعزازی اسناد جاری کر دیں ،

الرٹ نیوز

جامعہ بنوریہ عالمیہ سائٹ میں فلپائن کے درالحکومت منیلا میں ایشین کراٹے چیمیئن شپ میں کامیابی حاصل کرکے پاکستان کا نام روشن کرنے والی ٹیم کے کھیلاڑیوں کے اعزاز میں تقریب کا انعقاد کیا گیا ، جس میں ٹیم کے کوچ راجہ محمد آصف ، مولانا عمر فاروق ، عامر علی ، شفقت زرداد کو بنوریہ کی جانب سے اعزازی اسناد بھی دی گئیں ، تقریب میں رکن صوبائی اسمبلی راجہ اظہر، رئیس وشیخ الحدیث مفتی محمد نعیم ، مولانا نعمان نعیم ، مولانا سیف اللہ ربانی ، مولانا فرحان نعیم سے دیگر علماء طلبہ بھی شریک تھے ۔

اس موقع پر تحریک انصاف کے رکن سندھ اسمبلی راجہ اظہر نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ ملکی بچوں میں ٹیلنٹ کمی نہیں ہے ،نسل نوکو حوصلہ افزائی اور سپورٹ کی جائے تو یہ دنیا کو پیچھے کرنے کی صلاحیت رکھتے ہیں ،انہوںنے کہاکہ فلپائین منیلا میں پاکستان کے ان بچوں نے تیسری پوزیشن حاصل کرکے پاکستان کا نام روشن کیا توجہ دی جائے تو یہ دنیا کو پیچھے چھوڑ سکتے ہیں .

انہوں نے کہا کہ ان بچوں کا تعلق کسی بڑے گھرانے سے نہیں بلکہ متوسط گھرانوں سے ان پر توجہ دی گئی اوران کو عالمی سطحٰ پرموقع فراہم کیا جس پر یہ سرخ رو ہوئے اور ملک کا نام روشن کیا ، تحریک انصاف کی حکومت دیگر کھیلوں کی طرح کراٹوں کے حوالے سے بھی بیڑا اٹھائے گی۔ ہمیں خوشی ہے کہ ان کھیلاڑیوں کی حوصلہ افزائی کیلئے جامعہ بنوریہ عالمیہ نے اعزازی تقریب کا انعقاد کیا ۔

جامعہ بنوریہ عالمیہ کے رئیس وشیخ الحدیث مفتی محمد نعیم نے کہاکہ مدارس کے طلبہ علمی اعتبار سے ترقی کررہے ہیں وہی پر کھیلوں میں بھی آگے ہیں، طلبہ کے اندر ہر قسم کا ٹیلنٹ موجود ہیں ان کو موقع پر فراہم نہیں کیا جاتا ، ایم پی اے راجہ اظہر نے موقع پر فراہم کیا جس پر ان کے شکر گزار ہیں۔

انہوں نے کہا کہ جامعہ بنوریہ عالمیہ نے آج تک جہاں بھی مقابلوں میں حصہ لیا وہاں نمایاں کامیابیاں ہی سمیٹی ہے ، انہوں نے کہا کہ مدارس کے کسی طالب علم سے غلطی بھی ہوجائے تو اسے اچھالا جاتاہے لیکن کبھی قطر، کبھی دبئی کبھی کہاں مدارس کے طلبہ کامیابیاں سمیٹ کر ملک کا نام روشن کرتے ہیں اسے دیکھایا ہی نہیں جاتا اور نہ ہی سرکار کی جانب سے کوئی حوصلہ افزائی کی جاتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ جامعہ میں پانچ ہزار طلبہ زیر تعلیم ہیں ،ان کو کھیلنے کیلئے گراونڈ ہی مہیا نہیں ہے ،مقامی کالج کے گراونڈ بھی استعمال کرنے سے روکا جاتاہے.

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *