ڈاکوں سے توجہ ہٹانے کیلئے پانی کا تنازعہ کھڑا کیا گیا : سمیر میر شیخ

کراچی : سندھ حکومت پانی کے معاملے کو متنازع بنا کر سندھ کے دیگر مسائل سے دھیان ہٹانا چاہتی ہے ۔

پی ٹی آئی رہنماء سمیر میر شیخ نے کہا ہے کہ ارساء کی جانب سے لکھے گئے خط کا سندھ حکومت کے کسی نمائندے نے جواب دینا مناسب نہیں سمجھا ۔ پنجاب سے جو پانی گدو بیراج تک منتقل ہوتا ہے ، اس کی تفصیلات غلط فراہم کی جاتی ہیں ۔

سمیر میر شیخ نے کہا ہے کہ ارساء نے تکنیکی مسئلے کو حل کرنے کیلئے سندھ میں اپنی ٹیم بھیجی ، بدقسمتی حسب عادت حکومتی وزراء نے ارساء کی ٹیم کے ساتھ تعاون نہیں کیا، سندھ حکومت کے پاس تکنیکی مسئلے کو حل کرنے کیلئے کوئی ماہرین اور مشنری نہیں ہے ۔

مذید پڑھیں :آغا خان اسپتال سے مسجد کی جگہ کیوں ختم ہوئی؟

پی ٹی آئی رہنما کا کہنا ہے کہ سندھ کا پانی من پسند وڈیروں اور بیوروکریٹس کو فراہم کیا جا رہا یے، سندھ میں غریب کسان کی زمین بنجر اور وڈیروں کی زمین آباد ہیں، سندھ میں ڈاکوؤں راج اور کتوں کے واقعات کو چھپانے کیلئے پانی کا بلاجواز ڈرامہ کیا گیا ۔

سمیر میر شیخ کا کہنا ہے کہ 330 بااثر لوگوں کیخلاف محکمہ آبپاشی نے رپورٹ تیار کی ہے ،  رپورٹ نے حکومتی ہٹ دھرمی کی قلعی کھل دی ہے ،سندھ حکومت پانی کے معاملے پر جتنا جھوٹ بولے گی ہم اتنا سچ عوام تک پہنچائیں گے ۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *