صوبوں کو صرف لوٹ مار کیلئے 18ویں ترمیم دی گئی : جمال صدیقی

کراچی : پاکستان تحریک انصاف کراچی کے ترجمان و رکن سندھ اسمبلی جمال صدیقی نے کہا ہے کہ اٹھارویں ترمیم میں صوبوں کو خود مختاری صرف لوٹ مار کیلئے دی گئی ہے ۔

سندھ کے جعلی دعویدار کرپشن اور چور بازاری میں مصروف عمل ہیں۔ 6برس بیت گئے لیکن صوبائی حکومت کا ماس ٹرانزٹ منصوبہ آج بھی التوا کا شکار ہے ۔ سندھ میں کورونا کے نام پر 5ارب اور متعدی امراض کے ہسپتالوں کیلئے 10 ارب بھی کرپشن کی نظر ہو گئے ہیں ۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے پارٹی سیکریٹریٹ انصاف ہاوس سے جاری اپنے بیان میں کیا۔ جمال صدیقی کا مزید کہنا تھا کہ سندھ کی جیلوں میں مرمت کے نام پر 1 ارب 39 کروڑ کا ٹیکا لگایا گیا ۔ پیپلز پارٹی نے رقم کہاں غائب کی، رقم زمین کھا گئی یا آسماں نگل گیا ۔ جس پارٹی کا صدر ہی مسٹر ٹین پرسنٹ کے نام سے جانا جاتا ہو اس پارٹی کے وزراء کا اندازہ بخوبی لگایا جا سکتا ہے ۔

مذید پڑھیں :اگر اچانک پیشاب بند ہو جائے تو کیا کریں؟

سندھ حکومت کو ماہی گیروں کا خیال اس وقت آیا جب طوفان سر پر منڈلا رہا ہے۔ سندھ میں 13 سال حکمرانی کرنے والے آج پانی کی قلت پر ڈاین کی طرح رو رہے ہیں ۔ سندھ میں پانی کی قلت کی ذمہ دار صرف پیپلز پارٹی کی سندھ حکومت اور ان کے نا اہل وزراء ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ کرپشن کے نئے طریقے ایجاد کرنے میں سندھ حکومت کا کوئی ثانی نہیں۔ پیپلز پارٹی نے صوبے کو ماڈل صوبہ بنانے کے بجائے کھنڈرات میں تبدیل کر دیا ہے۔

پیپلز پارٹی کی وجہ سے صوبہ سندھ آج عالمی سطح پر بدنام ہو چکا ہے۔ پیپلز پارٹی کی سیاست سندھ میں کچھ دونوں کی مہمان ہے ۔ سندھ کے عوام پیپلز پارٹی کی ناقص طرز حکمرانی اور کرپشن سے تنگ آ چکے ہیں۔ جلد ہی پیپلز پارٹی کا صوبے سے خاتمہ یقین بنائیں گے ۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *