سی پورٹ سے بانڈڈ کیریئر کے ڈرائی پورٹ جانے والے کینٹینروں میں اربوں روپے کا کپڑا تبدیل

رپورٹ : عبداللہ ہمدرد

سی پورٹ سے بانڈڈ کئیرئیر کے ذریعے ڈرائی پورٹ جانے والے کنٹینرز سے اربوں روپے مالیت کا کپڑا تبدیل ہونے کا انکشاف ہوا ہے ،ڈائریکٹوریٹ جنرل آف ٹرانزٹ ٹریڈ کی نگرانی میں پکڑئے جانے والے کنٹینرز کو کسٹم پریوینٹیو کے سپرد کردیا گیا ہے ،مقدمے میں بانڈڈ کئیرئیر کمپنی کو بھی نامزد کیا جائے گا ۔

ذرائع کے مطابق استعمال شدہ کپڑوں کی آڑ میں قیمتی اشیاءاسمگلنگ کی تحقیقات میں سی پورٹ سے ڈرائی پورٹ منتقل ہونے والے کنٹینرز سے اربوں روپے مالیت کے سامان کی چوری کا انکشاف ہوا ہے ۔ذرائع کا کہنا ہے کہ یہ چوری بانڈڈ کئیرئیر کمپنی کی مدد سے کنسائمنٹ درآمد کنندگان ،کلیئرنگ ایجنٹ اور کسٹم افسران کی ملی بھگت سے کی جاتی ہے جب کہ بانڈڈ ئیر ئیر کے لئے لازمی استعمال ہونے والے ٹریکر کمپنی کے نمائندے بھی اس چوری میں ملوث ہیں ۔

واضح رہے کہ سی پورٹ پر آنے والی کنسائمنٹ کو ڈرائی پورٹ پر ڈیوٹی اور ٹیکسز کی ادائیگی کے لئے منتقل کرنے کی زمہ داری بانڈڈ کئیرئیر کمپنیوں کی ہوتی ہے جنہیں کسٹم حکام لائسنس جاری کرتے ہیں اور سی پورٹ سے ڈرائی پورٹ منتقلی کے دوران ان کنٹینرز پر بانڈڈ کئیرئیر کی سیل لگائی جاتی ہے اور ان کنٹینرز پر قانون کے مطابق ٹریکٹر بھی نصب ہوتے ہیں جس میں کنٹینرز کی منتقلی کا روٹ متعین ہوتا ہے اور ٹریکٹر کمپنی پر لازم ہوتا ہے کہ روٹ سے ہٹنے والے کنٹینر کی کسٹم حکام کو فوری نشاندہی کی جائے ۔

ذرائع نے بتایا کہ کسٹم پرینٹیو کی نشاندہی پر ڈائریکٹوریٹ جنرل آف ٹرانزٹ ٹریڈ نے بانڈڈ کئیر ئیر کمپنی کے ذریعے کنسائمنٹ منتقلی کے دوران سامان کی چوری کو پکڑا ہے جس میں درآمد کنندگان ،کلیئرنگ ایجنٹ ، بانڈڈ کئیر ئیر کمپنی اور بعض کسٹم افسران کے آشیرباد سے اربوں روپے مالیت کا کپڑا چوری کر کے پرانا کپڑا کنٹینرز میں رکھ دیا گیا ہے ۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ درآمد کنندگان نے دستاویزات میں پرانا کپڑا ظاہر کیا تھا اور ان کنٹینر ز کو سی پورٹ کے بجائے ڈارئی پورٹ منتقل کر کے کلیئر کرانا تھا تاہم جعل سازی کے ذریعے ان کنٹینرز کو راستے میں خالی کرایا گیا اور ان کنٹینرز میں دوبارہ پرانا کپڑا رکھ کر کنٹینرز کو سیل کردیا گیا تاکہ ڈرائی پورٹ پر منتقلی کے بعد پرانے کپڑے کی ڈیوٹی ادا کی جائے ۔

ذرائع نے بتایا کہ ڈائریکٹوریٹ جنرل آف ٹرانزٹ ٹریڈ نے دو درجن سے زائد کنٹینرز ضبط کر کے کسٹم پریوینٹیو کے سپرد کردئیے ہیں جہاں مقدمے کا اندراج کیا جائے گا .

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *