صحرائے تھر میں قائم اسکول منفرد فنِ تعمیر کا شاہکار

تھر اسکول

تحریر : روحل
فوٹو : Vinay Panjwani

بیضوی شکل کی ساخت پر بنا یہ گرلز اسکول جیسلمیر کے گاؤں سلکھا میں واقع ہے ۔ جسے ایک خاتون تعمیراتی ماہر ڈیانا کلوگ نے ڈیزائیں کیا ہے ۔ راجستھان میں صحرائے تھر کے وسط میں واقع ، پیلے رنگ کے ریت کے پتھر سے بنی یہ اسکول کی بیضوی شکل میں عمارت ، ایک خاص فن تعمیر کا شاہکار ہے ۔

بیضوی شکل میں عمارت کی ساخت ڈزائین کرنے کا مقصد خواتین کی طاقت کو علامت کے طور پر ابھارنا ہے۔ یہ عمارت آرٹ (واستو) کے ساتھ استحکام کی کہانی سناتی ہے ، کیونکہ طلباء باہر کی شدید گرمی سے بچتے ہوئے بغیر کسی پریشانی کے محفوظ صحن میں تعلیم حاصل کر سکتے ہیں اور کھیل سکتے ہیں ۔

مذید پڑھیں :ایکسپریس رمضان نشریات میں علمائے کرام کا حساس مسئلہ پر جھگڑا

ایسے وقت میں جب راجستھان میں درجہ حرارت بڑھتا جا رہا ہے اور یہاں گرم ہوا کے ساتھ دن بھر ریت چلتی رہتی ہے ، اسکول کا بہتر ماحول طلبا کے لیے کسی تحفہ سے کم نہیں ہے ۔ اسکول کی عمارت انڈا کار ( بیضوی شکل) کی ساخت کے ساتھ تعمیر کی گئی ہے ۔

عمارت کے اندر کوئی ایئرکنڈیشنر موجود نہیں ہے ، لیکن یہ صحرا کی تیز دھوپ میں اور یہاں تک کہ منفی موسم کے دوران بھی راحت فراہم کرتی ہے ۔ یہاں خوبصورت جالی دیوار اور ہوادار چھت کے ساتھ ساتھ شمسی تنصیبات ایک عمدہ آرکیٹیکچرل آرٹ کی مثال ہیں ۔

اس اسکول کا نام راجکماری رتناوتی گرلز اسکول ہے اور اس کی عمارت کو ڈیانا کیلوگ آرکیٹیکٹس نے ڈیزائن کیا ہے ۔ اس کی مالی اعانت مائیکل ڈوب کے ذریعہ قائم ایک بین الاقوامی غیر منفعتی تنظیم سی ٹی ٹی اے نے فراہم کی ہے ، جس کا مقصد مقامی لوگوں کو اپنی لڑکیوں کو اسکول بھیجنے پر آمادہ کرنا ہے ۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *