کسٹم کلیکٹریٹ نے EPZA میں قومی خزانے کو نقصان پہنچانے والوں پر مقدمہ درج کرلیا ،

رپورٹ : عبداللہ ہمدرد

کسٹم کلکٹریٹ ایکسپورٹ پورٹ قاسم نے کراچی ایکسپورٹ پروسسنگ زون اتھارٹی (کے ای پی زیڈ) میں جعلی دستاویزات کے ذریعے اسٹیل شیٹس کی آڑ میں قومی خزانے کو کروڑوں کا نقصان پہچانے پر درآمد کنندہ اور کلیئرنگ ایجنٹ کے خلاف مقدمہ درج کرلیا ہے ،

اسٹیل شیٹس میں مس ڈیکلئریشن میں ملوث ملزمان کے خلاف ڈائریکٹوریٹ آف کسٹم انٹیلی جنس کراچی میں 8مقدمات کے اندراج کے بعد تحقیقات جاری ہیں ۔ ذرائع کے مطابق ماڈل کسٹم کلکٹریٹ ایکسپورٹ پورٹ قاسم نے کراچی ایکسپورٹ پروسسنگ زون اتھارٹی سے جعلی دستاویزات پر قومی خزانے کو نقصان پہچانے کی کوشش کو ناکام بناتے ہوئے میسرز رائل امپکس ،میسرز کوسموس ٹریڈنگ کے پروپرائٹر عبداللہ ،میسرز پروکون انجینئرنگ ،میسرز یورو اسٹیل کمپنی کے خلاف مقدمے کا اندراج کردیا ہے ۔

کسٹم ذرائع کے مطابق مقدمے میں نامز د کمپنیوں نے جعلی دستاویزات آئرن اسٹیل کی استعمال شدہ شیٹس ظاہر کے پرائم کوالٹی کی شیٹس کو کلیئر کرا دیا ۔ذرائع نے بتایا کہ کسٹم ایکسپورٹ پورٹ قاسم کے حکام نے مقدمے میں قومی خزانے کو ٹیکس اور ڈیوٹی چوری کر کے قومی خزانے کو کروڑوں کا نقصان پہچانے پر جعل سازی اور منی لانڈرنگ کی دفعات کو بھی شامل کیا ہے ۔

واضح رہے کہ مذکورہ کمپنیوں کے خلاف ابتداءمیں ڈائریکٹوریٹ آف کسٹم انٹیلی جنس اینڈ انوسٹی گیشن کراچی کے شعبے اسپیشل انوسٹی گیشن یونٹ (ایس آئی یو) نے اسٹیل شیٹس کی آڑ میں قومی خزانے کو نقصان پہچانے اور انہی کنسائمنٹ کی آڑ میں جعلی دستاویزات پر اربوں روپے بینکنگ چینل کے ذریعے غیر قانونی طریقے سے منتقل کرنے پر8 مقدمات کا اندراج کررکھا ہے جس پر کسٹم انٹیلی جنس میں تحقیقات جاری ہیں تاہم قومی خزانے کو نقصان پہچانے والی کمپنیوں کے مالکان نے سندھ ہائی کورٹ سے ضمانت قبل ازوقت گرفتار ی حاصل کر رکھی ہے.

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *