سوشل میڈیا پر غیر منظور شدہ میرٹ لسٹ کی تشہیر پر HEC کی انکوائری شروع

اسلام آباد : ہائیر ایجوکیشن کمیشن (ایچ ای سی) نے بلوچستان اور سابقہ فاٹا (Federally Administered Tribal Areas) سے میڈیکل اور ڈینٹل کالجوں میں داخلے کے لیے اسکالر شپ کے حصول کے لیے اپلائی کرنے والے طلباء کی ذاتی معلومات سوشل میڈیا پر لیک ہونے پر شدید تشویش کا اظہار کیا ہے ۔

سوشل میڈیا پر گردش کرنے والی غیر مصدقہ میرٹ لسٹ کا فوری نوٹس لیتے ہوئے ایچ ای سی کی ترجمان کا کہنا ہے کہ سوشل میڈیا پر عارضی میرٹ لسٹ لیک کرنے کے ذمہ داران کے تعین کے لیے تحقیقات کا آغاز کیا جا رہا ہے ۔ اس تناظر میں پاکستان میڈیکل کمیشن کو درخواست کی جائے گی کہ رازدارانہ دستاویزات تک رسائی رکھنے والے افراد سے تحقیقات کر کے اس فعل کے مرتکب افراد کا تعین کیا جائے۔

مزید پڑھیں: پی ایچ ڈی ایسوسی ایشن نے آن لائن الیکشن کے نتائج جاری کردیئے

سوشل میڈیا پر ذائی معلومات عام ہونے کے سبب بلوچستان اور سابقہ فاٹا کے طلباء میں بے چینی پائی جا رہی ہے ۔ ایچ ای سی نے زور دیا ہے کہ ”پروویژن آف ہائیر ایجوکیشن اپورچونٹیز فار اسٹوڈنٹس آف بلوچستان اینڈ ارسٹوائل فاٹا ۔ فیز ٹو (Provision of Higher Educaiton Opportunities for the Students of Balochistan and Estwhile FATA-Phase-II)“ پراجیکٹ کے تحت میڈیکل اور ڈینٹل کالجوں میں داخلے کے لیے منتخب طلباء سے متعلق سوشل میڈیا پر گردش کرنے والی میرٹ لسٹ ایک غیر مکمل دستاویز ہے ۔جو کہ جاری نہیں کی جانی تھی ۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *