فرانسیسی حکومت نے مسلمانوں کی دل آزاری کی ہے جو قابل افسوس ہے : اکرام الدین

جرمن/برلن (انٹرنیشنل ڈسک) گلوبل ٹائمز میڈیا رپورٹ کے مطابق بین الاقوامی اعلی صحافتی تنظیم جزبہ اتحاد یونین آف جرنلسٹ یورپین آرگنائزیشن کے سربراہ اکرام الدین نے کہا کہ فرانسیسی حکومت نے مسلمانوں کی دل آزاری کی ہے جو قابل افسوس ہے ۔

انہوں نے کہا کہ فرانسیسی حکومت پیغیر اسلام و سرکار کائنات کی شان میں جاری گستاخانہ خاکے اور گستاخانہ تصاویر بند کرے کسی بھی مزہب سے تعلق رکھنے والے انسان کو یہ فوقیت بلکل حاصل نہیں ہے کہ کسی مزہب کے پیشوا کیخلاف نازیبا کلمات استعمال کرے ۔ ہر مذہب نے انسان کو انسانیت سیکھائی ہے پھر ایک انسان کیوں اتنا گر سکتا ہے کہ وہ کسی مزہب کے پیشوا کیخلاف نازیبا کلمات استعمال کرتا ہے ایسے واقعات سے دنیا بھر میں انتشار پیدا ہو سکتا ہے ۔

مذید پڑھیں :کراچی میں پارکنگ مافیا کا منظم ترین دھندہ کیسے چلتا ہے ؟

جو انسانیت کی توہین ہے جزبہ اتحاد یونین آف جرنلسٹ یورپین آرگنائزیشن کے سربراہ اکرام الدین نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ مزہب صرف انسان کا دین نہیں بلکہ ہر مذہب کی احترام کرنا بھی مزہب کا اہم رکن ہے ، جو ہر انسان کو فالو کرنا بہت اہم اور ضروری ہے ۔ اگر دنیا بھر میں امن و امان چاہتے ہیں تو کوئی بھی انسان کسی بھی مذہب کے پیشوا کیخلاف نازیبا کلمات استعمال نہ کرے کیونکہ یہ مذہب کی بے حرمتی ہے ۔

انہوں نے مزید کہا کہ مسیحی فرقے کے سربراہ پوپ فرانسس سے اپیل ہے کہ فرانسیسی حکومت کی طرف سے جو پیغیر اسلام کی شان میں گستاخی ہو رہی ہے اس پر نوٹس لیں کیونکہ ایسے واقعات کی وجہ سے دنیا بھر میں فسادات پیدا ہو سکتا ہے ، جو پوری دنیا کی انسانیت کیلئے خطرہ لاحق ہو سکتا ہے ۔

انہوں نے مزید کہا کہ ہر انسان کو اپنے دین کے مطابق زندگی گزارنی چاہیے اور ساتھ ساتھ ہر مذہب کا احترام کرنا بھی از حد ضروری ہے تا کہ دنیا بھر میں مذہب کے نام پر جاری فسادات کا خاتمہ ہو سکے ۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *