زکوٰۃ کے متعلق آپ کے تمام سوالوں کے جوابات

زکوٰۃ کے متعلق انتہائی اہم معلومات اور ہر طبقے مثلا عام لوگ ، تاجر، زمیندار اور جانور پالنے والوں سمیت ہر  طبقہ کے لئے منفرد و دینی معلومات کا خزانہ جمع کیا گیا  ہے ۔ جسے خود بھی پڑھیں اور دوسروں تک پہنچانے کا فرض ادا کریں ۔ جزاک اللہ۔

1 lakh. 👉2500.
2 lakh. 👉5000.
3 lakh. 👉7500.
4 lakh. 👉10000.
5 lakh. 👉12500.
6 lakh. 👉15000.
7 lakh. 👉17500.
8 lakh. 👉20000.
9 lakh. 👉22500.
10 lakh. 👉25000.
20 lakh. 👉50000.
30 lakh. 👉75000.
40 lakh. 👉1 lakh.
50 lakh. 👉125000
1 cror. 👉250000
2 caror. 👉5 lakh.

مزید پڑھیں: پاکستان میں زکوٰۃ کا نصاب 80 ہزار 933 روپے مقرر

ہم زکوٰۃ کیسے ادا کریں ؟

اکثر مسلمان رمضان المبارک میں زکاة ادا کرتے ہیں ۔ اس لیے اللہ کی توفیق سے یہ تحریر پڑھنے کے بعد آپ اس قابل ہو جائیں گے کہ آپ جان سکیں سونا ، چاندی ، زمین کی پیداوار، مال تجارت، جانور، پلاٹ، کرایہ پر دیے گئے مکان، گاڑیوں اور دکان وغیرہ کی زکاۃ کیسے ادا کی جاتی ہے ۔

1۔ زکوٰۃ کا انکار کرنے والا کافر ہے۔ (حم السجدۃ آیت نمبر 6-7)
2۔ زکوٰۃ ادا نہ کرنے والے کو قیامت کے دن سخت عذاب دیا جائے گا۔ (التوبہ34-35)
3۔ زکوٰۃ ادا نہ کرنے والی قوم قحط سالی کا شکار ہو جاتی ہے ۔ ( طبرانی)
4۔ زکاة كا منکر جو زکاۃ ادا نہیں کرتا ۔ اس کی نماز، روزہ، حج سب بیکار اور حبث ہیں ۔
5 ۔ زکوٰۃ ادا کرنے والے قیامت کے دن ہر قسم کے غم اور خوف سے محفوظ ہونگے ۔ (البقرہ277)
6۔ زکوٰۃ کی ادائیگی گناہوں کا کفارہ اور درجات کی بلندی کا بہت بڑا ذریعہ ہے ۔ ( التوبہ103)

زکوٰۃ کا حکم
ہر مال دارمسلمان مرد ہو یا عورت پر زکوٰۃ واجب ہے۔ خواہ وہ بالغ ہو یا نابالغ ،عاقل ہو یا غیر عاقل بشرط یہ کہ وہ صاحب نصاب ہو۔ یہاں یہ بات بہت اہم ہے کہ سود، رشوت، چوری ڈکیتی اور دیگر حرام ذرائع سےکمایا ہوا مال ان سے زکاۃ دینے کا بالکل فائدہ نہیں ہو گا۔ صرف حلال کمائی سے دی گئی زکوٰۃ قابل قبول ہے ۔

زکوٰۃ کتنی چیزوں پر ہے؟

زکوٰۃ چار چیزوں پر فرض ہے ۔ ۔سونا چاندی ، ۔زمین کی پیداوار ، ۔مال تجارت اور جانور ۔

سونے کی زکوٰۃ

87 گرام یعنی ساڑھےسات تولے سونا پر زکاۃ واجب ہے ۔ (ابن ماجہ1/1448)
نوٹ : سونا محفوظ جگہ ہو یا استعمال میں ہر ایک پر زکاۃ واجب ہے ۔ (سنن ابو دائود کتاب الزکاۃ اور دیکھئے حاکم جز اول صفحہ 390 ۔ فتح الباری جز چار صفحہ 13)

چاندی کی زکوٰۃ

612 گرام یعنی ساڑھے باون تولے چاندی پر زکاۃ واجب ہے اس سے کم وزن پر نہیں ۔ (ابن ماجہ)

مزید پڑھیں: سابق ڈسٹرکٹ زکوٰۃ چئیرمین مولانا محمد شعیب کی صفدر باغی کے حجرے آمد

زکوٰۃ کی شرح ۔

زکاۃ کی شرح بلحاظ قیمت یا بلحاظ وزن اڑھائی فیصد ہے۔(صحیح بخاری کتاب الزکاۃ)

زمین کی پیدا وار پر زکوٰۃ

مصنوعی ذرائع سے سیراب ہونے والی زمین کی پیدا وار اگر پانچ وسق سے زیادہ ہے یعنی (725 کلو گرام تقریبا 18 من ) ہے
تو زکاۃ یعنی عشر بیسواں حصہ دینا ہو گا ورنہ نہیں ۔ قدرتی ذرائع سے سیراب ہونے والی پیداوار پر شرح زکاۃ دسواں حصہ ہے دیکھئے ۔ (صحیح بخاری کتاب الزکاۃ )

نوٹ: زرعی زمین والے افراد گندم، مکی، چاول، باجرہ، آلو، سورج مکھی، کپاس، گنا اور دیگر قسم کی پیداوار سے زکاۃ یعنی (عشر) بیسواں حصہ ہر پیداوار سے نکالیں ۔ (صحیح بخاری کتاب الزکاۃ)

اونٹوں کی زکوٰۃ

پانچ اونٹوں کی زکاۃ ایک بکری اور دس اونٹوں کی زکاۃ دو بکریاں ہیں ۔ پانچ سے کم اونٹوں پر زکاۃ واجب نہیں ۔ ( صحیح بخاری کتاب الزکاۃ )

بھینسوں اور گایوں کی زکوٰۃ 

30 گائیوں پر ایک بکری زکوٰۃ ہے ۔ 40 گائیوں پر دو سال سے بڑا بچھڑا زکاۃ دیں ۔ ( ترمذی1/509 )۔ بھینسوں کی زکوٰۃ کی شرح بھی گائیوں کی طرح ہے ۔

بھیڑ بکریوں کی زکوٰۃ

40 سے ایک سو بیس بھیڑ بکریوں پر ایک بکری زکاۃ ہے ۔ 120 سے لے کر 200 تک دو بکریاں زکاۃ ہیں ۔ (صحیح بخاری کتاب الزکاۃ ) ۔ چالیس بکریوں سے کم پر زکاۃ نہیں ہے ۔

مزید پڑھیں: کالج، جامعات کے غریب اسٹوڈنٹس بھی زکوٰۃ کے مستحق ہیں، خطیب شاہی مسجد چترال

کرایہ پر دیئے گئے مکان پر زکوٰۃ

کرایہ پر دیئے گئے مکان پر زکوٰۃ نہیں لیکن اگر اس کا کرایہ سال بھر جمع ہوتا رہے ۔ جو نصاب تک پہنچ جائے اور اس پر سال بھی گزر جائے تو پھر اس کرائے پر زکوٰۃ واجب ہے ۔ اگر کرایہ سال پورا ہونے سے پہلے خرچ ہو جائے تو پھر زکوٰۃ نہیں ۔ شرح زکوٰۃ اڑھائی فیصد ہو گی ۔

گاڑیوں پر زکوٰۃ

کرایہ پر چلنے والی گاڑیوں پر زکوٰۃ نہیں بلکہ اس کے کرایہ پر ہے ۔ وہ بھی اس شرط کے ساتھ کہ کرایہ سال بھر جمع ہوتا رہے اور نصاب تک پہنچ جائے ۔
نوٹ : گھریلو استعمال والی گاڑیوں،جانوروں، حفاظتی ہتھیار۔ مکان وغیرہ پر زکوٰۃ نہیں (صحیح بخاری)

سامان تجارت پر زکوٰۃ

دکان کسی بھی قسم کی ہو اس کے سامان تجارت پر زکوٰۃ دینا واجب ہے ۔ اس شرط کے ساتھ کہ وہ مال نصاب کو پہنچ جائے اور اس پر ایک سال گزر جائے ۔

نوٹ : دکان کے تمام مال کا حساب کر کے اسکا چالیسواں حصہ زکاۃ دیں یعنی ۔ دکان کی اس آمدنی پر زکاۃ نہیں جو ساتھ ساتھ خرچ ہوتی رہے صرف اس آمدنی پر زکاہ دینا ہو گی ۔جو بینک وغیرہ میں پورا سال پڑی رہے اور وہ پیسے اتنے ہو کہ ان سے ساڑھے باون تولے چاندی خریدی جا سکے ۔

پلاٹ یا زمین پر زکوٰۃ

جو پلاٹ منافع حاصل کرنے کے لیئے خریدا ہو اس پر زکاۃ ہوگی ذاتی استعمال کے لیئے خریدا گیا پلاٹ پر زکاۃ نہیں۔😊 (سنن ابی دائودکتاب الزکاۃ حدیث نمبر1562)
کس کس کو زکوٰۃ دی جا سکتی ہے۔
ماں باپ اور اولاد کےسوا سب زکاۃ کےمستحق مسلمانوں کو زکاۃ دی جاسکتی ہے۔والدین اور اولاد پر اصل مال خرچ کریں زکاۃ نہیں۔
نوٹ: (ماں باپ میں دادا دادی ، نانا نانی اور اولاد میں پوتے پوتیاں،نواسیاں نواسے بھی شامل ہیں۔( ابن باز)

✅زکوٰۃکےمستحق لوگ
۔مساکین(حاجت مند) ، غریب ، زکاۃوصول کرنےوالے ، ۔مقروض ، غیرمسلم جواسلام کے لیے نرم گوشہ رکھتاہو، قیدی ، مجاھدین، مسافر (سورۃالتوبہ60)1

زکوٰۃ کے متعلق چند سوالات کے جوابات
سوال: زکوة کے لغوی معنی بتائیے؟
جواب: پاکی اور بڑھو تری کے ہیں۔

سوال: زکوة کی شرعی تعریف کیجئے؟
جواب: مال مخصوص کا مخصوص شرائط کے ساتھ کسی مستحقِ زکوۃ کومالک بنانا۔

سوال: کتناسونا ہوتو زکوۃ فرض ہوتی ہے؟
جواب: ساڑھے سات تولہ یا اس سے زیادہ ہو

مزید پڑھیں: داؤد انجینئرنگ کا یونیورسٹی سائبر سیکورٹی، مصنوعی ذہانت میں BS کرانے کا اعلان

سوال: کتنی چاندی ہوتو زکوۃ فرض ہوتی ہے؟
جواب: ساڑھے باون تولہ یا اس سے زیادہ ہو۔

سوال: کتنا روپیہ ہوتو زکوۃ فرض ہوتی ہے؟
جواب: اس کی مالیت ساڑھے باون تولہ چاندی کے برابر ہو۔

سوال: کتنا مالِ تجارت ہوتو زکوۃ فرض ہوتی ہے؟
جواب: اس کی مالیت ساڑھے باون تولہ چاندی کے برابر ہو۔

سوال: اگر کچھ سونا ہے، کچھ چاندی ہے، یا کچھ سونا ہے، کچھ نقد روپیہ ہے، یا کچھ چاندی ہے، کچھ مالِ تجارت ہے، ان کو ملاکر دیکھا جائےتو ساڑھے باون تولے چاندی کی مالیت بنتی ہےاس صورت میں زکوۃ فرض ہے یا نہیں؟
جواب: فرض ہے۔

سوال: چرنے والے مویشیوں پر بھی زکوٰة فرض ہےیانہیں؟
جواب: فرض ہے۔

سوال: عشری زمین کی پیداوار پر بھی زکوٰة فرض ہےیانہیں؟
جواب: فرض ہے۔

سوال: ایک صاحب نصاب شخص کودرمیان سال میں ۳۵ہزار کی آمدنی ہوئی،تویہ۳۵ ہزار بھی اموالِ زکوۃ میں شامل کئے جائیں گے یا نہیں؟
جواب: شامل کئے جائیں گے۔

مزید پڑھیں: کوئی ساتھ دے نہ دے عید کے بعد بھر پور تحریک چلائیں گے : JUI اعلان

سوال: صنعت کار کے پاس دو قسم کا مال ہوتا ہے، ایک خام مال، جو چیزوں کی تیاری میں کام آتا ہے، اور دُوسرا تیار شدہ مال، ان دونوں قسم کے مالوں پر زکوٰة فرض ہےیانہیں؟
جواب: فرض ہے۔

سوال : مشینری اور دیگر وہ چیزیں جن کے ذریعہ مال تیار کیا جاتا ہے، ان پر زکوٰة فرض ہے یا نہیں؟
جواب : فرض نہیں ہے۔

سوال : استعمال والے زیورات پر زکوٰة ہے یا نہیں؟
جواب : زکوٰة ہے۔

سوال : زکوٰة انگریزی مہینوں کےحساب سےنکالی جائے گی یا ہجری ( قمری ) مہینوں کےحساب سے نکالی جائے گی ؟
جواب : قمری مہینوں کے حساب سے نکالی جائے گی۔

سوال : پلاٹ اگر اس نیت سے لیا گیا تھا کہ اس کو فروخت کریں گے اس پر زکوٰة واجب ہو گی یا نہیں؟
جواب : واجب ہو گی ۔

سوال : پلاٹ خریدتے وقت تو فروخت کرنے کی نیت نہیں تھی، لیکن بعد میں فروخت کرنے کا ارادہ ہوگیا تو اس پر زکوٰة واجب ہے یا نہیں؟ ۔
جواب : جب فروخت کردیا جاے اور رقم پر ایک سال گزر جاےتب زکوٰة فرض ہے .اگر پہلے سے صاحب نصاب ہےتو یہ رقم نصاب مین مل جاے گی ۔

سوال : جو پلاٹ رہائشی مکان کے لئے خریدا گیا ہو اس پر زکوٰة ہے یا نہیں؟
جواب : نہیں۔

سوال : اگر پلاٹوں کی خرید و فروخت کا کاروبار کیا جائے اور فروخت کرنے کی نیت سے پلاٹ خریدا جائے توزکوۃ کس طرح ادا کی جائے گی ؟
جواب : ان کی کل مالیت پر زکوٰة ہر سال واجب ہو گی ۔

مزید پڑھیں: سندھ اسمبلی: پارلیمانی سیکرٹری برائے اوقاف ہیر سوہو نے ارکان کے سوالوں کے جواب دیے

سوال : جو مکان کرایہ پر دیا ہے،اس کی زکوٰة کا کیا حکم ہے؟
جواب : اس کے کرایہ پر جبکہ نصاب کو پہنچے تو زکوٰة واجب ہو گی ۔

سوال : حج کے لئے رکھی ہوئی رقم پر زکوٰة ہے یا نہیں؟
جواب : زکوٰة واجب ہے۔

سوال: کسی کوہم زکوٰة د یں اور اس کو بتائیں نہیں تو زکوٰة ادا ہو جائے گی یا نہیں؟
جواب : ادا ہوجائے گی۔

سوال : ملازم نے اضافی تنخواہ کا مطالبہ کیا تو مالک نے زکوٰة کی نیت سے اضافہ کردیا کیا اس کی زکوٰة ادا ہوئی یا نہیں؟
جواب : زکوٰة ادا نہیں ہوئی۔

سوال : کیاانکم ٹیکس ادا کرنے سے زکوٰة ادا ہوجاتی ہے؟
جواب : زکوٰة ادا نہیں ہوتی۔

سوال : اپنے ماں باپ، اور اپنی اولاد، اسی طرح شوہر بیوی ایک دُوسرے کو زکوٰة دے سکتےہیں یانہیں؟
جواب : نہیں۔

سوال : جو لوگ خود صاحبِ نصاب ہوں ان کو زکوٰة دینا جائزہےیا نہیں؟
جواب : نہیں۔

سوال : آنحضرت صلی اللہ علیہ وسلم کے خاندان (ہاشمی حضرات) کو زکوٰة دے
سکتے ہیں یا نہیں ؟
جواب : نہیں۔

سوال: اپنے بھائی، بہن، چچا، بھتیجے، ماموں، بھانجے کو زکوٰة دینا جائز ہے یا نہیں؟
جواب: جائز ہے اگر مستحق ہیں ۔

مزید پڑھیں: داؤد انجینئرنگ کا یونیورسٹی سائبر سیکورٹی، مصنوعی ذہانت میں BS کرانے کا اعلان

سوال : آنحضرت صلی اللہ علیہ وسلم کے خاندان یعنی: آلِ علی، آلِ عقیل، آلِ جعفر، آلِ عباس اور آلِ حارث بن عبدالمطلب، ان پانچ بزرگوں کی نسل سے ہو تواس کو زکوٰة دی جاسکتی ہے یا نہیں؟
جواب : نہیں۔

سوال : اگرسید غریب اور ضرورت مند ہو تو ان کی خدمت کیسے کرنی چاہئے؟
جواب : زکوۃ وصدقات کےعلاوہ دُوسرے فنڈ سے۔

سوال : سادات کو زکوٰة کیوں نہیں دی جاتی؟
جواب : زکوٰة، لوگوں کے مال کا میل ہے۔

سوال : سیّد کی غیرسیّدبیوی جو زکوۃ کی مستحق ہو زکوٰة دی جاسکتی ہےیا نہیں؟
جواب : اس کو زکوٰة دے سکتے ہیں۔

سوال : مال دار بیوی کا غریب شوہربیوی کے علاوہ دوسروں سے زکوٰة لے سکتا ہے یا نہیں؟
جواب : لے سکتا ہے۔

سوال : غیر مسلم کو نفلی صدقہ دے سکتے ہیں،کیا وہ زکوٰة اور صدقۂ فطر کے بھی مستحق ہیں؟
جواب : نہیں۔

سوال : مدارسِ عربیہ میں زکوٰة دینا جائز ہے یا نہیں؟
جواب : بہتر ہے بوجہ دین کی اشاعت کے

سوال : صاحبِ نصاب لوگ بھی خود کو مسکین ظاہر کر کے زکوۃ حاصل کر لیتے ہیں، اس کا کیا حکم ہے؟
جواب : ان کو زکوٰة لینا حرام ہے۔

سوال : چندہ وصول کرنے والے کو زکوٰة سے مقرّرہ حصہ دینا جائز ہے یا نہیں ؟
جواب : جائز نہیں۔

سوال : زمین بارش کے پانی سے سیراب ہوتی ہے، تو پیداوار اُٹھنے کے وقت اس پر کتنا حصہ اللہ تعالیٰ کے راستے میں دینا واجب ہے؟
جواب : دسواں حصہ۔

سوال : اگر زمین کو خود سیراب کیا جاتا ہے تو اس کی پیداوار کاکتنا حصہ صدقہ کرنا واجب ہے؟
جواب : بیسواں حصہ ۔

سوال : ایک ملک کی کرنسی سے زکوۃ ادا کرکے دوسرے ملک بھیجا جائے تو زکوۃ کی ادائیگی کا اعتبار کس ملک کی کرنسی کا ہو گا ؟
جواب : جس ملک کی کرنسی سے زکوۃ ادا کی گئی۔

مزید پڑھیں: ریاست مدینہ کا دعویدار سودی نظام کے خاتمے کا اعلان کرے : عالمی مجلس

سوال : رہائشی گھر، جسم کے کپڑے ، گھر کے سامان ،سواری میں زکوۃ فرض ہے یا نہیں؟
جواب : نہیں۔

سوال : جواہر جیسے موتی ، یاقوت، اور زبر جدپر زکوۃ فرض ہے یانہیں جب کہ وہ تجارت کے لئے نہ ہوں ؟
جواب : نہیں۔

سوال : زکوۃ کی ادائیگی کب واجب ہو گی ؟
جواب : نصاب پر قمری سال کا گذرنا شرط ہے۔

سوال : اگر سال کے شروع میں نصاب کامل ہو، پھر سال کے درمیان کم ہوجائے ليكن نصاب سے كم نہ ہو پھر سال کے اخیر میں نصاب کامل ہو تو اس میں زکوٰۃ واجب ہو گی یا نہیں ؟
جواب: واجب ہو گی۔

سوال : ایک شخص شروع سال میں مالک نصاب ہو گیا، درمیان سال میں اس مال میں اور اضافہ ہو گیا، اضافہ تجارت سے ہوا ہویا کسی نے تحفہ یاہدیہ دیا ہو یا میراث کا مال ملا ہو، بہر حال مال میں اضافہ ہو گیا، اب پورے مال پر زکوہ واجب ہو گی یا شروع سال کے مال پر واجب ہو گی ؟
جواب : پورے مال پر واجب ہو گی۔

سوال: جو شخص اپنے تمام مال کو صدقہ کر دے اور اس میں زکوٰۃ کی نیت نہ کرے تو اس سے زکوٰۃ ساقط ہو جائے گی یانہیں؟
جواب: ساقط ہو جائےگی۔

سوال : اگر کسی شخص کا فقیر کے پاس قرض ہو اور وہ زکوٰۃ کی نیت سے اس کے ذمہ کو بری کردے تو زکوٰۃ کی ادائیگی صحیح ہو گی یا نہیں؟
جواب : ادائیگی صحیح نہیں ہوتی ۔

سوال : سونا چاندی کی زکوٰۃ میں سونا اور چاندی کا ٹکڑا وزن سے نکالےیا قیمت ادا کرے؟
جواب : اختیار ہے۔

سوال : مصارفِ زکوٰۃ میں فقیر کسے کہتے ہیں؟
جواب : وہ شخص ہوتا ہے جو نصاب سے کم كا مالک ہوتا ہے۔

سوال : مصارفِ زکوٰۃ میں مسکین کسے کہتے ہیں؟
جواب : جو بالکل کسی چیز کا مالک نہ ہو

سوال : مصارفِ زکوٰۃ میں عامل کسے کہتے ہیں؟
جواب : وہ شخص ہوتا ہے جو زکوۃ اور عشر کو اکھٹا کرتا ہے۔ اور اسلامی حکومت کی طرف سے مقرر کردہ ہو.

سوال : مصارفِ زکوٰۃ میں مقروض کسے کہتے ہیں؟
جواب : یہ وہ شخص ہے جس کے ذمہ قرض ہو، اپنے قرض کی ادائیگی کے بعد نصاب کامل کا مالک نہ رہ جاتا ہو۔تجارتی قرض کا مسئلہ الگ ہے

مزید پڑھیں: دین خیر خواہی(علی حسن)

سوال : مصارفِ زکوٰۃ میں مسافر سے کیامراد ہے؟
جواب : جس کا اپنے وطن میں مال ہو، لیکن اس کا مال سفر میں ختم ہوچکا ہو اور منگوانے کا کوی ذریعہ بهی نہ ہو

سوال : مسافر پر زکوۃ کی کتنی رقم خرچ کرنا درست ہے؟
جواب : اتنی مقدار صر ف کی جائے گی کہ وہ اپنے وطن پہنچ سکے۔

سوال : زکوۃ کی تمام قسموں پر زکوۃ صرف کرنا جائز ہےیاکسی ایک قسم پر صرف کرنا جائز ہے؟
جواب : دونوں جائز ہے۔

سوال : کافر کو زکوٰۃ دینا جائزہےیا نہیں؟
جواب : جائزنہیں۔

سوال : مالدار کو زکوٰۃ دینا جائزہےیا نہیں؟
جواب : جائز نہیں۔

سوال : مالداربچے پر زکوٰۃ صرف کرنا جائزہےیا نہیں؟
جواب : جائز نہیں

سوال : بنی ہاشم اور ان کے غلاموں پر زکوۃ صرف کرنا جائز ہےیانہیں؟
جواب : جائز نہیں

سوال : مالک نصاب کا زکوۃ کو اپنے اصول پر جیسے باپ ، دادا ، اوپر تک صرف کرنا جائزہےیا نہیں؟
جواب : جائز نہیں

سوال : مالک نصاب کا اپنے فروع پر جیسے ، بیٹا ،پوتا، نیچے تک زکوٰۃ کو صرف کرنا جائز ہےیانہیں؟
جواب : جائز نہی

سوال : مالک نصاب بیوی شوہر پراور مالک نصاب شوہر اپنی بیوی پر زکوۃ صرف کرسکتا ہے یا نہیں؟
جواب : نہیں۔

سوال : مسجد یا مدرسہ کی تعمیر یا راستہ یا پل کے درست کرنے میں زکوۃ صرف کرنا جائز ہےیانہیں؟
جواب : جائز نہیں

مزید پڑھیں: 40 طرح کا صدقہ

سوال : میت کو کفنانے یا میت کے قرض کو پورا کرنے میں زکوٰۃ صرف کرنا جائز ہے یا نہیں؟
جواب : جائز نہیں۔

سوال : زکوٰۃ کی ادائیگی بغیر تملیک(مالک بنانا) کے صحیح ہوتی ہے یا نہیں؟
جواب : نہیں۔

سوال : زکوۃ رشتہ داروں پر اورپھر پڑوسیوں پر صرف کرنا جائز ہے یا نہیں؟
جواب : بہتر ہے۔

سوال : مکمل نصاب کےبقدر زکوۃ ایک شخص کو دینا درست ہےیانہیں؟
جواب : مکروہ تنزیہی ہے۔

سوال : مقروض پر اس کے قرضے کی ادائیگی کیلئے نصاب سے زیادہ صرف کرنا مکروہ ہے یا نہیں؟
جواب : مکروہ نہیں۔

سوال : بغیر ضرورت کے ایک جگہ سے دوسری جگہ زکوٰۃ کو منتقل کرناکیسا ہے؟
جواب : مکروہ تنزیہی هے

سوال : اپنے رشتہ داروں کیلئے زکوۃ کا منتقل کرناکیسا ہے؟
جواب : مکروہ نہیں ہے۔

سوال : مسجد یا مدرسہ کی تعمیر یا راستہ یا پل کے درست کرنے میں زکوۃ صرف کرنا جائز ہےیانہیں؟
جواب : جائز نہیں۔

سوال : ایک شخص جو زکاة کا مستحق نہیں ہے، لیکن وہ ڈاکٹر بننا چاہتاہے،کیا اس کو زکاة دی جاسکتی ہے؟
جواب : صدقات نافلہ سے اس کی مدد کی جاسکتی ہے۔

سوال : اگر زکاة کسی غریب غیر مسلم کو دیدی جائے تو اداہوجائے گی یا نہیں؟
جواب : زکاة ادا نہ ہو گی ۔

سوال : کیا اپنے مستحق زکاة بھائی کو زکاة کی رقم دی جا سکتی ہے؟
جواب : دی جا سکتی ہے ۔

مزید پڑھیں: “خودی نہ بیچ غریبی میں نام پیدا کر”

سوال: کیا مستحق زکاة چچیرے ، ممیرے، خلیرے بھائی کو یا اپنے بھتیجے کو زکاة دے سکتے ہیں ؟
جواب: دے سکتے ہیں

سوال: کیا مدرسہ کے مہتمم یا ناظم کو جو طلبہ کی وکیل ہوتے ہیں زکاة دی جاسکتی ہے ؟
جواب: دی جاسکتی ہے۔بلکہ افضل ہے

سوال: زکوۃ کی ادائیگی کے لئےسونےکی قیمت فروخت کا اعتبارہوگا یاقیمت خرید کا ؟
جواب: قیمت فروخت

سوال: سونے پر زکاة موجودہ قیمت کے حساب سے ہوگی یا خریدنے کے وقت کی قیمت کے حساب سے ہوگی ؟
جواب: موجودہ قیمت کا اعتبار ہوگا۔

سوال: کیا زکاة مستحق زکاة اپنے بھانجے کی تعلیم پر خرچ کرسکتے ہیں؟
جواب: ہاں۔مگر اس کو دے دی جائے تاکہ وہ مالک بن جاے

سوال: کیا نابالغ بیٹا یا بیٹی کے مال پر بھی زکوة دینا فرض ہے؟
جواب: نہیں

سوال: مسجد کے امام یامؤذن کی ماہانہ تنخواہ کو زکاۃ میں شامل کرسکتے ہیں یا نہیں؟
جواب: نہیں۔

سوال: کیا لڑکی زکوة کی رقم اپنے والدین کو دے سکتی ہے۔
جواب: نہیں۔

سوال: کیا نفلی صدقہ کا گوشت صدقہ کرنے والا بھی خود استعمال کرسکتا ہے؟
جواب: کرسکتا ہے۔

سوال: صدقات واجبہ جیسے نذر وغیرہ کا گوشت کیا صدقہ دینے
والا خود بھی کھاسکتا ہے۔
جواب: نہیں.

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *