طارق روڈ سے گرفتار دہشت گرد SRA کا کمانڈر تھا : پریس کانفرنس

کراچی : ڈی آئی جی سی ٹی ڈی عمر شاہد کی ایس ایس پی سی ٹی ڈی عارف عزیز کے ہمراہ پریس کانفرنس میں اہم انکشافات سامنے آئے ہیں ۔

گذشتہ روز طارق روڈ سے گرفتار دہشت گرد ایس آر اے کارکن اور کمانڈر نکلے ، سی ٹی ڈی نے ملزم ممتاز سومرو کو غیر ملکی ریسٹورنٹ کے سامنے سے گرفتار کیا ۔ ملزم گذشتہ روز طارق روڈ پر غیر ملکی ریسٹورنٹ کے مالک کی گاڑی پر مقناطیسی ڈیوائس سے حملہ کرنا چاہتا تھا ۔

ملزم کی نشاندہی پر ریسٹورنٹ کے سامنے کھڑی کی گئی موٹر سائیکل سے ڈیوائس اور ریموٹ کنٹرول برآمد کیا گیا ۔گرفتار ملزم کی نشاندہی پر ایس آر اے کا انتہائی ملزم دہشتگرد جاوید منگریو کو ہینڈ گرنیڈ اور دھماکا خیز مواد سمیت گرفتار کیا ۔جاوید منگریو ایس آر اے کراچی کا کمانڈر ہے ۔

مذید پڑھیں :عبدالحق عرف میاں مٹھا نے 81 سال کی عمر میں دوسری شادی کیوں کی ؟

دوران تفتیش دہشتگردوں کی جانب سے انتہائی اہم انکشافات کئے گئے ۔ کراچی اسٹاک ایکسچینج حملے میں بی ایل اے دہشتگردوں کو اسلحہ فراہم کیا ۔ کمانڈر سجاد کے حکم پر چار کلاشنکوف اور گولیاں فراہم کی ۔ 2020میں ارشاد رانجھانی کیس میں بدلہ لینے کیلئے انسپکٹر عامر ریاض پر حملہ کیا جس میں وہ شہید ہوا ۔

2020 میں کمانڈر سجاد کے حکم پر جمالی پل کے پاس ہوٹل پر ایک شخص کو قتل کیا ۔ اسٹیل ٹاون کے خالی پلاٹ پر موٹر سائیکل میں بارودی مواد لگایا ۔ گھی کے کنستر میں بارود اور بال بیئرنگ تیار کرکے صدر کے علاقے مین رینجرز کی موبائل پر حملے کا منصوبہ بنایا ۔ بارودی موٹر سائیکل سے قائد آباد میں رینجرز کی موبائل پر ٹارگٹ کرنا تھا ۔

صدر میں رینجرزکی موبائل پر حملہ کرنے پہنچے لیکن ریموٹ نے کام نہ کیا اور بلاسٹ نہیں ہوا ۔ بارود سے بھری موٹر سائیکل کو اسٹیل ٹاون پولیس نے برآمد کر لیا ۔ بی ایل اے دہشتگردوں نے جیکب آباد میں 32 ہینڈ گرنیڈ اور 25 بارودی مواد فراہم کیا ۔ ہینڈ گرنیڈ اور بارودی مواد سندھ کے مختلف علاقوں میں دہشتگردانہ کارروائی کیلئے حاصل کیا تھا ۔ ایس آر اے کمانڈعر سجاد شاہ کہنے پر17 ہینڈ گرنیڈ اور 25 کلو بارودی مواد کوٹری سے کراچی پہنچایا ۔

مزید پڑھیں :تحریک لبیک کے 6 کارکنان شہید درجنوں زخمی ہونے کی اطلاعات

جون 2020 میں گلستان جوہر کامران چورنگی پر رینجرز موبائل پر ہینڈ گرنیڈ سے حملہ کیا ۔ لیاقت آباد میں احساس پروگرام کے دفتر کے باہر بھی ہینڈگرنیڈ سے رینجرز موبائل پر حملہ کیا ۔ گلستان جوہر ریٹائرڈ رینجرز انسپکٹر پر حملہ کیا ۔ کورنگی ناصر جمپ پر اسٹیٹ ایجنسی پر ہینڈ گرنیڈ سے حملہ کیا جس سے کئی افراد زخمی ہوئے ۔ گلشن اقبال بیت المکرام کے قریب جماعت اسلامی کی ریلی پر ہینڈ گرنیڈ سے حملہ کیا ۔

شکار پور اور جیکب آباد رینجرز ہیڈ کوارٹر پر ہینڈ گرنیڈ سے حملہ کیا ۔گلشن اقبال میں جشن آزادی کے اسٹال پر ہینڈ گرنیڈ سے حملہ کیا ۔ مذہبی تنظیم کے لاڑکانہ کے امیر کے بیٹے پر بھی قاتلانہ حملہ کیا ۔ پی ٹی آئی کے حلیم عادل شیخ کے ٹرین مارچ پر گرنیڈ حملہ کیا ۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *