قصور پولیس اہلکار نے مدرسہ کی خاتون کو کیوں مارا ؟

قصور : پاکستان کے صوبہ پنجاب کے ضلع قصور کی تحصیل چونیاں کی بستی غوث صابری میں افسوس ناک واقعہ نے ایک بار پولیس کی پیش ورانہ تربیت پر سوالیہ نشان کھڑے کر دیئے ہیں ۔

رپورٹ کے مطابق قصور کے تھانہ کھڈیاں کے سب انسپکٹر جمیل خان و محمد امین نے اپنی نفری کے ہمراہ 15 کی کال پر بستی غوث صابری میں کارروائی کی ، جس میں مضروبہ خاتون کے سابق شوہر مولوی اکرم کا کہنا تھا کہ میرے گھر پر مذکورہ خاتون قبضہ کرنا چاہتی ہیں ۔ تاہم پولیس نے لیڈی پولیس نہ ہونے کے باوجود کارروائی کرتے ہوئے مذکورہ مدرسہ نما گھر پر دھاوا بولا اور خاتون کو تشدد کا نشانہ بنایا ۔ جس کی ویڈیو وائرل ہو گئی ۔ جس پر ملک بھر سے شدید ردعمل آیا ہے ۔

جس کے بعد قصور کے ڈویژنل پولیس آفیسر DPO نے احکامات جاری کیئے اور خاتون پر تشدد اور غیر انسانی سلوک روا رکھنے پر متعلقہ پولیس افسر کو معطل کر کے اسے گرفتار کرا لیا تھا ۔ ڈی پی او کے حکم پر تھانہ کھڈیاں میں مقدمہ نمبر 226/2021 میں پولیس آرڈر 2002 کی سمیت مختلف دفعات 155c اور 354 ت ب لگائی ہیں ۔

قصور تھانہ کھڈیاں میں سب انسپکٹر جمیل خان کے خلاف درج مقدمہ کا عکس

قصور کی بستی غوث صابری کے مدرسہ میں پیش آنے والے واقعہ میں درج مقدمہ کی تفتیش تھانہ کھڈیاں کے انسپکٹر رشید شہزاد کو دی گئی ہے ۔

معلوم ہوا ہے کہ بابا اسحاق مرحوم ﻧﮯ قصور کے علاقے کھڈیاں خاص ﻣﯿﮟ لڑکیوں کے لیئے مدرسہ عائشہ صدیقہ ؓ بنایا تھا ۔ ﺟﺲ ﻣﯿﮟ اہل علاقہ اور دور دراز سے بچیاں اس مدرسہ میں پڑھ رہی تھیں ۔ عوامی چندے سے یہ مدرسہ چلتا رہا، ﺑﺎﺑﺎ ﺍﺳﺤﺎﻕ نے اپنی بیٹی خدیجہ ﮐﺎ نکاح مولوی اکرم سے کیا اور وہ 2008 ﻣﯿﮟ فوت ہو گئے ۔

مذید پڑھیں :دارالعلوم کراچی کا JDC کیخلاف فتوی سامنے آ گیا

ﺧﺪﯾﺠﮧ ﺑﯽ ﺑﯽ ﻧﮯ 2018 ﻣﯿﮟ مولوی اکرم سے ﻃﻼﻕ ﻟﮯ ﻟﯽ ۔ یہاں سے دونوں کے درمیان مدرسے پر قبضہ کی لڑائی شروع ہوئی ۔ مولوی اکرم نے اچھو کباڑی کے ساتھ مل کر مبینہ طور پر پولیس کو رشوت دی اور مدرسے پر حملے کے لئیے بھیج دیا ۔اور خود اپنی بیٹے کی شادی پر چلے گئے ۔ پولیس بظاہر 15 کی کال پر کارروائی کی ۔ اور لیڈیز پولیس نہ ہونے کی وجہ سے خود ہی خواتین کو مار پیٹ کر نکالنے کی کوشش کی ۔

واضح رہے پولیس اہلکار کے دھکوں کے وقت مولوی اکرم پاس کھڑے ہوئے دیکھائی بھی دیتے ہیں جو پولیس اہلکاروں کو روک بھی نہیں رہے ۔ ادھر الرٹ کو معلوم ہوا ہے کہ تھانہ کھڈیاں نہ نے جہاں اپنے ہی اہلکار پر کارروائی کی ہے وہیں پر خاتون مسماۃ خدیجہ کیخلاف قبضہ کا مقدمہ اس کے سابق شوہر مولوی اکرم کی مدعیت میں درج کر لیا ہے ۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *