مقبوضہ کشمیر میں عائد کرفیو ختم کروانے کیلئے عالمی دروازے کھٹکھٹائیں گے، کابینہ کا فیصلہ

وفاقی کابینہ نے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی حکومت کی جانب سے عائد کرفیو ختم کرانے کیلئے تمام عالمی دروازے کھٹکھٹانے کا متفقہ فیصلہ کیا ہے۔

ریڈیو پاکستان کے مطابق مذکورہ فیصلے سے متعلق وزیراعظم کی معاون خصوصی برائے اطلاعات ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کابینہ اجلاس کے بعد بریفنگ کےدوران آگاہ کیا۔

انہوں نے کہا کہ وزیراعظم نے مسئلہ کشمیر کو عالمی سطح پر اجاگر کرنے اور بے گناہ کشمیریوں پر مظالم کو بے نقاب کرنے کیلئے حکومتی اقدامات کے بارے میں کابینہ کو اعتماد میں لیا۔

وزیراعظم نے مودی حکومت کے فسطائیت اور انتہاپسندی پر مبنی سوچ سے کابینہ کو آگاہ کیا جس کی تمام کابینہ ارکان نے شدید مذمت کی۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان کی موثر سفارتکاری کے باعث اسلامی تعاون تنظیم اور یورپی یونین میں موثر آوازیں بلند ہورہی ہیں۔

ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے حکومت کے کشمیریوں کے ساتھ کھڑا رہنے کے عزم کا اعادہ کیا۔

ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کابینہ کے اجلاس میں پیش کیے گئے دیگر امور کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ وزیراعظم نے صوبوں کی مشاورت کے ساتھ ہسپتالوں کے فضلے کو ٹھکانے لگانے کی پالیسی کابینہ کے آئندہ اجلاس میں پیش کرنے کی ہدایت کی۔

فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ وزارت اطلاعات و نشریات نے کابینہ کو تجویز پیش کی ہے کہ بڑے شہروں میں صحافیوں اور عام شہریوں کی سہولت کیلئے تعلیمی مراکز قائم کیے جائیں۔

نوجوان اور عام آدمی انٹرنیٹ کی سہولت اور معلومات سے استفادہ کرسکیں گے۔

کابینہ کو مدرسہ اصلاحات اور ملک کے مختلف تعلیمی اداروں میں یکساں نصاب کے بارے میں تفصیلی بریفنگ دی گئی۔

یکساں پالیسی کے تحت نصاب کو حتمی شکل دی جائے گی اور وزیر تعلیم اس سلسلے میں میڈیا کو تفصیلات سے آگاہ کریں گے۔

ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ کابینہ نے مختلف وزارتوں کے تحت کنٹریکٹ اور ڈیلی ویجز پر کام کرنے والے ملازمین کی خدمات کو مستقل کرنے کا معاملہ ملتوی کر دیا۔

انہوں نے کہا کہ اعلیٰ اختیاراتی کمیٹی ملازمین کو مستقل کرنے کے عمل کو شفاف بنانے کے لئے تمام وزارتوں سے اعدادو شمار اکٹھے کرے گی۔

انہوں نے کہا کہ کابینہ نے سینٹ اجلاس کی وجہ سے جائیداد کے شعبے کے ریگولیٹری ادارے کے بارے میں بحث ملتوی کر دی اس معاملے پر بحث کابینہ کے آئندہ اجلاس میں کی جائے گی تاکہ ملک میں ہائوسنگ کی مختلف سکیموں کو قومی دھارے میں لایا جاسکے۔

ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہاکہ کابینہ نے سفارتی اور سرکاری پاسپورٹ رکھنے والوں کیلئے مالٹا کے لئے ویزا کی شرائط ختم کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *