گیلانی کو شکست، پی پی کا عدالت جانے کا فیصلہ

اسلام آباد: چیئرمین سینیٹ کے انتخاب میں یوسف رضا گیلانی کی شکست کے بعد پاکستان پیپلز پارٹی (پی پی پی) نے عدالت سے رجوع کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

خیال رہے کہ  سابق چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی دوبارہ چیئرمین سینیٹ منتخب ہوگئے،  ان کے حریف اپوزیشن کے حمایت یافتہ سابق وزیراعظم یوسف رضا گیلانی اکثریت کے باوجود شکست کھاگئے۔

پریزائیڈنگ افسر مظفر حسین شاہ کی زیر صدارت ایوانِ بالا کا اجلاس شروع ہوا جس میں جماعت اسلامی کے سینیٹر کے علاوہ تمام سینیٹرز نے ووٹ کاسٹ کیا تھا۔

شام بجے پولنگ کا وقت ختم ہوا تو گنتی شروع ہوئی، جس کے بعد پریزائیڈنگ افسر نے یوسف رضا گیلانی کے سات ووٹوں کے مسترد ہونے کا اعلان کیا۔

مزید پڑھیے: سنجرانی چیئرمین سینیٹ منتخب، سابق وزیراعظم گیلانی کو اکثریت کے باوجود شکست

ووٹ مسترد ہونے کے بعد یوسف رضا گیلانی کو 42 ووٹ ملے جبکہ صادق سنجرانی 48 ووٹوں کے ساتھ دوبارہ چیئرمین سینیٹ منتخب ہوگئے۔

تاہم اب اس شکست کے بعد پیپلز پارٹی کے سینیٹر مصطفیٰ نواز کھوکھر نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ہم نےعدالتی فیصلے نکال لیے ہیں، ہم سپریم کورٹ یا ہائی کورٹ جائیں گے۔

مصطفیٰ نواز کھوکھر نے کہا کہ قانون کہتا ہے نام کے اوپر لگائی گئی مہر ٹھیک ہے، ہم یہ ڈاکا نہیں ہونے دیں گے۔

رہنما پیپلز پارٹی نے کہا کہ ہم تحریکِ عدم اعتماد بھی لاسکتے ہیں، ہمیں یقین ہے کسی نے دھوکا نہیں دیا، ہم ایک ووٹ سے جیتے ہیں۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *