آئی بی اے کا CEJ،رنسٹرا کا ڈیجیٹل اسٹوری ٹیلنگ کی صلاحیت بڑھانے کیلئے معاہدے پر دستخط

کراچی : سینٹر فار ایکسیلنس ان جرنلزم (سی ای جے) اور رنسٹرا ٹیکنالوجیز پرائیوٹ۔ لمیٹڈ نے طلبہ کی ڈیجیٹل اسٹوری ٹیلنگ کی مہارت کو بڑھانے کے لئے مل کر کام کرنے کے لئے مفاہمت کی یادداشت پر دستخط کیے ہیں۔ یہ معاہدہ انٹرایکٹو ورکشاپس، سیمینارز اور کورسز کے ذریعہ ڈیجیٹل مہارت کو بڑھائے گا، جس کے لئے رنسٹرا اپنے جدید ترین پلیٹ فارم کو ڈیجیٹل دستاویزی فلمی میلوں اور تھیم پر مبنی ویڈیو مقابلوں کے لئے فراہم کرے گا۔

اس موقع پر انسٹی ٹیوٹ آف بزنس ایڈمنسٹریشن (سی ای جے-آئی بی اے) کے سینٹر فار ایکسلنس ان جرنلزم کے ڈائریکٹر کمال صدیقی نے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوے کہا، ” کہ رنسٹرا کے ساتھ یہ شراکت داری ہمارے طلبا کو ان کے ڈیجیٹل کہانی کے خیالات اور تخلیقی تاثرات کو سامنے لانے کیلئے مدد فراہم کرے گا۔ ہم امید کرتے ہیں کے مقابلوں اور دستاویزی فلمی میلوں کے ذریعہ رنسٹرا کے ساتھ معاشرتی چیلنجوں اور معاشی مواقوں کے لئے نئے آئیڈیاز سامنے لائیں گے۔ سی ای جے اور اس سے وابستہ دوہزارسے زائد پیشہ ور افراد کے تخلیقی ذہنوں کے لئے یہ ایک بہت بڑا موقع ہوگا کہ وہ میڈیا کے ایک نئے دور میں داخل ہو سکیں۔

رنسٹرا کے شریک بانی اور چیئرمین ڈاکٹر عادل اختر نے اپنے پیغام میں کہا، ”اس تعاون کے ذریعے، سی ای جے۔آئی بی اے اور رنسٹرا مختصرانداز میں کہانی پیش کرنے کی تکنیک یعنی فلمیں، ڈرامے، میوزک ویڈیو، تھیٹر، دستاویزی فلمیں رنسٹرا اور دوسرے پلیٹ فارمز کیلئے بنا سکیں گے۔ ” انہوں نے مزید کہا، ” رنسٹرا پاکستانی کانٹینٹ اور ٹیلنٹ کیلئے مقامی اور بین الاقوامی میڈیا مارکیٹوں اور ڈیجیٹل پلیٹ فارمز تک پہنچنے کا ایک ذریعہ ہے۔ آئی رنسٹرا کے ابھرتے ہوئے ستاروں کو رنسٹراکے مرکزی پلیٹ فارم پر فروغ دیا گیا ہے جو ملک اورعالمی سطح پر مواقع کھولے گا۔ جدید ترین رنسٹراپلیٹ فارم مواد تخلیق کاروں کو ان کے مواد کی تخلیق، نمائش اور منیٹائز کرنے کی سہولت فراہم کرتاہے۔

اس موقع پررنسٹرا کے چیف ایگزیکٹو آفیسر عامر جہانگیر نے کہا کہ، ”یہ شراکت داری اہم ہے تاکہ نوجوان کہانی بیان کرنے والوں کو ڈیجیٹل مہارت سے آراستہ کیا جاسکے جو ان کی تخلیقی صلاحیت اور معاشی خوشحالی کو برقرار رکھنے میں مدد فراہم کرسکیں۔ رنسٹراکا اگلے پانچ سالوں میں دس لاکھ مواد تخلیق کاروں کو سامنے لانے کا وژن ہے، جو ملک میں ڈیڑھ سو ملین امریکی ڈالر کو عبور کرتے ہوئے ایک نئی ڈیجیٹل تخلیقی معیشت تشکیل دے سکتا ہے۔

مفاہمت نامہ کی تفصیلات کے مطابق، دونوں ادارے طلبہ میں ڈیجیٹل کہانی سنانے کی تکنیک اور تخلیقی سوچ کو بہتر بنانے پر کام کریں گی۔اداروں نے میڈیا ٹیک کے خلا میں تحقیق کے مواقع پیدا کرنے پر بھی اتفاق کیاہے۔ اس سے طلبا کو(کانٹینٹ)مواد کی صنعت میں نئے کام کے مواقع تلاش کرنے میں مدد ملے گی۔رنسٹرا ڈاٹ کام کو مستقبل کے ممکنہ ورک پارٹنر کی حیثیت سے، سی ای جے-آئی بی اے کے طلباء کو عالمی میڈیا-انٹرپرینیورشپ کیلئے مدد فراہم کرے گا۔

سینٹر فار ایکسلنس ان جرنلزم (سی ای جے) پاکستانی صحافیوں اور میڈیا کے پیشہ ور افراد کی پیشہ ورانہ ترقی، تربیت اور نیٹ ورکنگ کے لئے پہلا قدم ہے۔ سی ای جے، انٹرنیشنل سینٹر فار جرنلسٹس (آئی سی ایف جے)، انسٹی ٹیوٹ آف بزنس ایڈمنسٹریشن (آئی بی اے)، اور میڈل اسکول آف جرنلزم آف نارتھ ویسٹرن یونیورسٹی کے مابین ایک باہمی تعاون ہے۔

سی ای جے کراچی میں آئی بی اے کے سٹی کیمپس میں مقیم ہے۔ اس میں پاکستان کے تمام حصوں سے تعلق رکھنے والے صحافیوں اور میڈیا کے پیشہ ور افراد کے لئے آن لائن اور ذاتی طور پر تربیتی ماڈیول پیش کیے گئے ہیں۔ ممتاز بین الاقوامی اور مقامی صحافی پاکستانی نیوز رومز کی ضروریات کو پورا کرنے کے لئے مہارت پر مبنی کورسز کا انعقاد کرتے ہیں۔ سینٹر پاکستانی نیوز میڈیا انڈسٹری سے بہت قریب ہے اور ایک مشاورتی بورڈ کے تحت کام کرتا ہے جس میں پاکستان کے نامور اور تجربہ کار ایڈیٹرز اور میڈیا پیشہ ور افراد شامل ہیں۔ پاکستان بھر کے نیوز رومز کے نیوز ڈائریکٹرز اور ایڈیٹرز سی ای جے کے ہر ماڈیول کے لئے عملہ تفویض کرتے ہیں۔ آزاد صحافیوں اور میڈیا پیشہ ور افراد کو بھی اس میں شرکت کی دعوت دی گئی ہے۔

سی ای جے فعال طور پر گفتگو اور پینل مباحثوں کی میزبانی کرتا ہے جو صحافتی برادری کے لئے آزاد ہے۔ مرکز کا مستقل مقام آئی بی اے سٹی کیمپس میں نئے امن ٹاور میں چوتھی منزل پر ہے۔ کلاس روم اور آفس خالی جگہوں کے علاوہ، سی ای جے ایریا میں ورکنگ براڈکاسٹ اسٹوڈیو اور جدید ترین ملٹی میڈیا لیب اور ایڈ یٹنگکی مشینیں شامل ہیں۔ لیب صحافیوں کو ایک حقیقی نیوز روم کے ماحول میں عملی مہارت سیکھنے کا موقع فراہم کرتی ہے جہاں ان کے پاس جدید ترین ٹیکنالوجیز اور وسائل تک رسائی ہے۔ سی ای جے کو امریکی محکمہ خارجہ کی گرانٹ کے ذریعہ ممکن بنایا گیا ہے۔
رنسٹرا ڈائس فاؤنڈیشن یو ایس اے کے تخلیقی آرٹس اینڈ میڈیا انیشیٹو (ڈائس کام) کی سوچ کی قیادت کا نتیجہ ہے۔

یہ ڈائس فاؤنڈیشن کے قومی انوویشن باسکٹ (این آئی بی) پروگرام کا ایک حصہ ہے، جس کا مقصد میڈیا کو پاکستان کی ترقی کی حکمت عملی کے ایک سنگ بنیاد کے طور پر تشکیل دینا ہے۔ رنسٹرا پاکستان کا پہلا مختصر فارم ڈیجیٹل میڈیا پلیٹ فارم ہے۔ یہ تنظیم پاکستان اور اس سے باہر کے ابھرتے ہوئے اور قائم کردہ مواد تخلیق کاروں اور فلم سازوں کو کاروبار کے مواقع فراہم کرتی ہے۔ رنسٹرا مواد تخلیق کاروں کو پوری دنیا میں ایک بڑی پاکستانی کمیونٹی تک رسائی فراہم کرتا ہے، اور یہ ایک انوکھا پلیٹ فارم تیار کرنے میں کامیاب رہا ہے جو ڈراموں اور فلموں کی پیش کش کرتا ہے، جبکہ صارفین کو ایک ہی پلیٹ فارم پر اپنا مواد تیار کرنے کے قابل بناتا ہے۔ اس میں مواد کے مقابلے کی ایک خصوصیت بھی موجود ہے جہاں، پاکستان میں 100 سے زیادہ تعلیمی ادارے مختلف موضوعات پر برتری کیلئے مقابلہ کر رہے ہیں۔ ایپلی کیشن کی فیسٹ فیچر نے کچھ معروف فلمی تہواروں کو اپنی فلموں اور دستاویزی فلموں کو ڈیجیٹل دیکھنے کے لئے رنسٹرا کا پلیٹ فارم فراہم کیا ہے۔ اس سے ملک میں ناظرین کے لئے ایک بے مثال تجربہ پیدا ہوا ہے۔
پریمیئر شوز اور فلموں کے ساتھ تخلیقی اور آزادانہ مواد کو رنسٹرا کی ویب سائٹ رنسٹرا ڈاٹ کام پر ملاحظہ کرکے یا گوگل پلے اسٹور اور / یا ایپل ایپ اسٹور سے ایپس ڈاؤن لوڈ کرکے حاصل کیا جاسکتا ہے۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *