سمیرشیخ کے خلاف انسداد دہشت گردی کے مقدمات قائم کرنا افسوسناک ہے، تاجر برادری

کراچی (22فروری2021) پاکستان کی کاروباری برادری کے نمائندہ ادارے یونائٹیڈ بزنس گروپ (یو بی جی) کے سرپرست اعلیٰ اور ایف پی سی سی آئی کے سابق صدر ایس ایم منیر،کورنگی ایسوسی ایشن آف ٹریڈ اینڈ انڈسٹری (کاٹی) کے سابق چیئرمین فرحان الرحمان اوردیگر تاجر رہنماﺅں نے نوجوان تاجر اور تحریک انصاف کے رہنما سمیر میر شیخ کی گزشتہ دنوں گرفتاری اوران پر دہشت گردی کے دفعات کے تحت مقدمات کی مذمت کی

انہوں نے سمیر میر شیخ کی فوری رہائی کا مطالبہ کیا ہے۔ یو بی جی کے سرپرست اعلیٰ ایس ایم منیر اورفرحان الرحمان نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ سمیر میر شیخ بزنس کمیونٹی کے نوجوان رہنما ہیں اورکاروباری حلقوں میں ممتاز حیثیت کے حامل ہیں لیکن انہیں ملیر میں ہونے والے ضمنی الیکشن میں ہنگامہ آرائی کے شبے میں گرفتار کرکے ان کے خلاف انسداد دہشت گردی کی دفعات کے تحت مقدمات قائم کردیئے گئے ،

مزید پڑھیں: انجمن تاجران نوتھیہ بازار کی حلف برداری تقریب،شوکت یوسفزئی شریک

ایک جانب پاکستان پیپلزپارٹی کی اعلیٰ قیادت خود یہ چاہتی ہے کہ تجارتی شعبے سے نوجوان شخصیات ملکی سیاست کا حصہ بنیں اور جب ہمارے ملک کے تعلیم یافتہ اور اچھے گھرانوں کے نوجوان سیاسی جماعتوں میں شامل ہوتے ہیں تو ان کے خلاف مقدمات قائم کردیئے جاتے ہیں

سمیر میر شیخ بھی پاکستان تحریک انصاف کا حصہ بنے ہیں۔ تاجررہنماﺅں نے کہا کہ جب ملیر کے حلقے میں پولنگ کے دوران ہنگامہ آرائی ہورہی تھی تو سمیر میر شیخ اپنے گھر پر تھے اور وہیں سے انہیں حراست میں لیا گیاتھا تو پھر دہشت گردی کی دفعات کے تحت ان پر مقدمہ کیونکر قائم ہوسکتا ہے،

مزید پڑھیں: معروف تاجر سراج قاسم تیلی انتقال کرگئے

تاجر اور صنعتکاردہشت گرد نہیں ہوسکتے۔ایس ایم منیر اورفرحان الرحمان نے سابق صدر آصف علی زرداری،چیئرمین پاکستان پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری اوروزیراعلیٰ سندھ سید مرادعلی شاہ سے مطالبہ کیا کہ سمیر میر شیخ کو فوری رہا کیا جائے اوران قائم جھوٹے مقدمات ختم کرائے جائیں۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *