انٹر بورڈمیں نتائج میں بڑے پیمانے پر رد و بدل کا انکشاف

رپورٹ : اختر شیخ

اعلی ثانوی تعلیمی بورڈ کراچی میں اینٹی کرپشن نے تیسری بار چھاپہ مارکر ریکارڈ قبضے میں لیا ہے ۔اینٹی کرپشن کی ٹیم 8گھنٹے مسلسل سرچنگ کرتی اور ریکارڈ جمع کرتی رہی ہے ۔

الرٹ نیوز کو حاصل ہونےو الی ویڈیو کے مطابق اینٹی کرپشن کی چھاپہ مار ٹیم میں کل 18افراد موجود تھے جن میں ایک مجسٹریٹ اور سینیئر افسران شامل ہیں ۔اینٹی کرپشن افسران واہلکاروں نے پری میڈیکل ،پری انجنیئرنگ ،سائنس جنرل و پرائیویٹ سیکشنز کے داخلی و خارجی راستوں کو بند کردیا گیا تھا اور رات کو جاتے ہوئے متعدد طلبہ کی جوابی کاپیاں ہمراہ لے گئے ہیں ۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ انٹر بورڈ میں حسب ماضی فیل طلبا و طالبات کولاکھوں روپے رشوت لےکرپاس کرنے کا دھندہ انتہائی خفیہ طریقہ سے چلایا جارہا تھا جس کو انٹرمیڈیٹ بورڈ کا ایک اعلی افسر گھر سے بیٹھ کر ڈیل کررہا تھا تاہم اس سارے معاملے میں موجودہ کنٹرولر عظیم صدیقی کو پھنسانے کی کوشش کی گئی ہے جبکہ حال ہی میں کنٹرولر تعینات ہونے والا عظیم صدیقی انتہائی محتاط تھا جس کو سخت دبا ؤ میں لا کر دھندہ کرنے پر مجبور کیا جارہا تھا ۔

ذرائع نے بتایا کہ چیئرمین انٹر میڈیٹ بورڈ کراچی انعام احمد کی اجازت سے انٹر میڈیٹ کے نتائج تبدیل ہوئے ہیں۔ذرائع نے بتایاکہ اینٹی کرپشن کی ٹیم چیئرمین انٹر بورڈ سے تفتیش کر رہی ہے، جبکہ نتائج تبدیل کرنے والے اساتذہ کو بھی شامل تفتیش کیا جائے گا۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *