وقف املاک ایکٹ دینی مدارس و مساجد میں قبول نہیں کیا جائے گا : مفتی تاج الدین

راولپنڈی : جمعیت علمائے اسلام ضلع اٹک کے امیر مولانا مفتی تاج الدین ربانی نے جامعہ اسلامیہ صدر راولپنڈی میں تحفظ مساجد و مدارس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ” وقف املاک ایکٹ ” کو دینی مدارس و مساجد میں کامیاب نہیں ہونے دیا جائے گا ۔

کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ لوگوں کو اور غیر سیاسی علماء کو تو کپتان نے ریاست مدینہ کا نام لیکر بے وقوف بنایا ہی ہے تاہم کم از کم اہل مدارس کو سمجھ آ گیا ہے اور باقیوں کو بھی جلد سمجھ آ جائے گا کہ چونا خوب لگایا گیا تھا ۔

مذید پڑھیں :محمد رضوان کی دوران میچ نماز کی ادائیگی کی ویڈیو وائرل

انہوں نے بیان میں کہا کہ یہ کٹھ پتلی حکمران اپنے بیرونی آقاؤں سے ایسے ناپاک وعدے وعید کر چکے ہیں ۔ جن کو پایہ تکمیل تک پہنچانے کے نتیجے میں پاکستان کو گرے لسٹ سے وائٹ لسٹ میں ڈال دیا جاۓ گا ۔ شنید ھے کہ دو چار ہی نکات ایسے باقی رہ گئے ہیں کہ جن کو پورا کرنا ابھی باقی ھے ۔ اس میں اھم نکتہ مدارس دینیہ کے گرد حکمرانی منحوس گھیرا تنگ کر کے انہیں کنٹرول کرنے کی مذموم کوشش کے جائے گی ۔

بدقسمتی سے حکومتی ذوالجناح طاہر اشرفی جیسے خچر مبینہ طور پر اس سارے عمل میں سہولت کار بنے ہوئے ہیں ۔ الحمدللہ قائد جمعیت مولانا فضل الرحمن اور وفاق المدارس العربیہ نے ان حکومتی ہتھکنڈوں کے آگے بند باندھ رکھا ھے ۔ ان شاءاللہ تعالی حکومتی عزائم خاک میں مل جائیں گے ۔جامعہ اسلامیہ میں ان غلیظ حکومتی اقدامات کے خلاف ھر ممکن روکاوٹ کا عزم مصمم کیا گیا ھے ۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *