کیا اسرائیلی قومی ترانہ دہشت گردی کا سبب ہے؟

دنیا کا واحد قومی ترانہ اسرائیل کا ھے جس میں کھلے عام دہشت گردی اور سینوں میں نیزے گاڑھنے اور عام خون بہانے کو کامیابی قراردیا گیا ھے 🇮🇱🇮🇱🇮🇱🇮🇱🇮🇱🇮🇱🇮🇱🇮🇱🇮🇱

یہ تحریرحالیہ  متحدہ عرب امارات کے اسرائیل کو تسلیم کرنے اور سفارتی تعلقات قائم کرنے کے پس منظر میں لکھی گئی ھے اسے ضرور پڑھ کر اپنے حلقہ اثر میں پہنچائیے کہ اسرائیل کو تسلیم کرنا دہشت گردی عام کرنے کے مترادف ھے

اسرائیلی قومی ترانے کا انگریزی اور اردو ترجمہ (موصولہ)

مزید پڑھیں: اسرائیل حامی مولویوں کا استقبال انڈوں اور ٹماٹر کے ساتھ کیا جائے گا،راشد سومرو

* The Israeli National Anthem *

Do Arabs know its translation?

כל עוד בלבב פנימה

י יהודי הומיה

ולפאֲתי מזרח קדימה

עין לציון צופייה –

 

עוד לא אבדה תקוותנו

התקווה בת שנות אלפיים

להיות עם חופשי בארצנו

ארץ ציון וירושלים

مزید پڑھیں: اسرائیل نے UAE میں سفارتخانہ کھول لیا

Translation of the hymn:

* As long as there is a Jewish soul * in the heart!

– * yearning forward, towards the east *

– * Our hope is not made yet *!

– * A thousand years dream on our land *

– * The land of Zion and Jerusalem *

– * Let those who are our enemy shudder *

– * Let all the inhabitants of (Egypt and Canaan *) tremble

– * Let the inhabitants of Babylon shudder *

– * To loom over their skies, panic and terror from us *

– * When we plant our spears in their chests *!

– * And we see their blood being shed *

* -And their heads cut off *!

– * Then we will be God’s chosen people where God willed *

A question worth asking:

Who were the original terrorists, the beheadings, and the bloody ones?

If you please, contribute to publishing it in various languages ​​and re-transmit it۔

مزید پڑھیں: اسرائیل مردہ باد ملین مارچ میں عوام اُمڈ آئی

اسکا اردو ترجمہ:–

جب تک دل میں یہودی روح ہے٭

یہ تمنا کے ساتھ مشرق کی طرف بڑھتا ہے٭

ہماری امید ابھی پوری نہیں ہوئی٭

اپنی زمین پر ایک ہزار سال کا خواب ٭

اپنے خوابوں کی دنیا یوروشلم ٭

ہمارے دشمن یہ سن کے ٹھٹھر جائیں٭

مصر اور کنعان کے سب لوگ ، لڑ کھڑا جائیں٭

بیبو لون ( بغداد) کے لوگ ٹھٹھر جائیں ٭

ان کے آسمانوں پر ہمارا خوف اور دہشت چھائی رہے٭

جب ہم اپنے نیزے ان کی چھا تیوں میں گھاڑ دیں گے٭

اور ہم ان کا خون بہتے ہوئے٭

اور ان کے سر کٹے ہوئے دیکھیں٭

تب ہم خداوند کے پسندیدہ بندے ہونگے جو چاھتا ہے *

مزید پڑھیں: اسرائیل کو تسلیم کرنے کا مسئلہ( چھٹی قسط)

عرب حکو متیں اس قومی عزم ، دہشتگردی کےارادے،  خون خرابے اور اسکےحلف کے باوجود اسرائیل کو تسلیم اور اس کے قومی ترانے پر احتراماً کھڑے ہوکے سر جھکاتے ہیں —— اس بے شرمی اور بےغیرتی کا کیا کریں؟

ضروری نوٹ:–

(اس سے سب مسلمانوں کو آگاہ ضرور کریں تاکہ ہر مسلم اسرائیل کے دہشت گردانہ عزائم کو سمجھے اور انہیں ہلکا لے کر بے خبری میں مارا نہ جائے)

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *