واٹر بورڈ کا احسن آباد میں پانی چوروں کیخلاف آپریشن میں 4 گرفتار اور نیٹ ورک مسمار

کراچی : وزیر بلدیات ناصر حسین شاہ کی ہدایت پر واٹر بورڈ کے انسداد پانی چوری سیل کی بڑی کارروائی کرتے ہوئے لاکھوں گیلن پانی چوری کرنے کا بڑا نیٹ ورک پکڑا گیا ۔

ضلع شرقی کے علاقے احسن آباد میں کارروائی کے دوران 72 انچ اور 48 انچ کا کنکشن پکڑا گیا ہے،انسداد پانی چوری سیل کے انچارج راشد صدیقی کی نگرانی میں کارروائی کی گئی ۔

جس میں واٹر مافیا مین لائنوں سے پانی چوری کر کے صنعتی ایریا اور دیگر علاقوں کو فروخت کر رہی تھی ۔ واٹر بورڈ کا پانی چوری کر کے زیر زمین نیٹ ورک سے انڈسٹریل ایریاز کو سپلائی کیا جاتا تھا ۔

مذید پڑھیں :واٹر بورڈ کے افسر تنویر شیخ نے NICVD میں پھر ہائیڈرنٹ چلوا دیا

کاروائی کے دوران ہیوی مشینری، پانی کی موٹریں اور ہیوی پمپ ضبط کر لیے گئے ۔ چوری شدہ پانی بڑے ٹینکس میں جمع کر کے ہیوی مشینری کے ذریعے زیر زمین لائنوں سے احسن آباد انڈسٹریل ایریا کو سپلائی کیا جاتا تھا ۔ اس موقع پر پانی چوروں کے خلاف تھانہ سپر ہائی وے انڈسٹریل ایریا میں مقدمہ درج کرایا گیا ہے ۔

جس کے بعد پولیس نے موقع سے ہی افضل اور اس کے چار بھائیوں کو بھی گرفتار کر لیا ہے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ مذکورہ شخص کا تعلق ایک سیاسی جماعت سے تھا جس نے واٹر بورڈ حکام کو سیاسی جماعت کی دھمکیاں بھی دیں جن کو ویڈیو میں سنا جا سکتا ہے ۔ ملزم افضل اور اس کے چار بھائیوں پر پانی چوری کی دفعات لگا کر انہیں گرفتار کر لیا گیا ہے ۔

مذید تفصیلات کے لئے لنک پر تصاویر اور مقدمہ کی تفصیل دیکھی جا سکتی ہے ۔

افضل اور اس کی پانی چوری پر آپریشن کی تفصیل

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *