واٹر بورڈ TP-II کالونی میں غیر قانونی تعمیرات شروع

کراچی : واٹر بورڈ کی ٹریٹمنٹ پلانٹ ٹو (TP-II ) محمود آباد اسٹاف کالونی میں بشیر نامی شخص نے مسجد کی آڑ میں غیر قانونی تعمیرات شروع کر دی ہیں ۔

بشیر ایک کالعدم تنظیم کی آڑ میں مسجد پر قبضہ کرنے کی کوشش کر رہا ہے ۔ جب کہ مسجد میں واٹر بورڈ کی جانب ایک اور شخص کو امام بنایا گیا ہے ۔ بشیر کے ایک بھائی منشیات فروشی کے الزام میں متعدد بار جیل یاترا بھی کر چکے ہیں ۔جن کے بارے میں معلوم ہوا ہے کہ وہ آج کل توبہ تائب ہو چکے ہیں ۔

ان کے نام پر اب بھی بشیر لوگوں کو دھمکیاں دیتا ہے۔ بشیر نے جعلی دستاویزات کی بنیاد پر وفاق المدارس العربیہ پاکستان سے سرکاری جگہ پر قائم مسجد کے اندر مکتب کو الحاق کرا لیا ہے ۔ جب کہ اس کا مدرسہ بھی رجسٹرڈ نہیں ہے۔ اصولی طور پر مذکورہ مدرسہ واٹر بورڈ کی جانب سے ملنے والے اپوائنمنٹ منٹ لیٹر کے حامل عالم دین کو ہی وفاق المدارس سے رجسٹرڈ کرانے کے اجازت ہے ۔

مذید پڑھیں :کالجز کے اساتذہ کو مبینہ جعلی صحافی ہراساں کرنے لگے

معلوم رہے کہ سندھ ہائی کورٹ کے واضح احکامات کے باوجود واٹر بورڈ کی تمام کالونیوں میں تجاوزات کے خلاف سخت آپریشن جاری ہے ۔ ایسے میں TP-II اسٹاف کالونی میں غیر متعلقہ افراد شب و روز غیر قانونی تعمیراتی کام میں مصروفِ عمل ہیں ۔

متعلقہ ایگزیکٹیو انجینیئر ایاز حسین تونیو کے منع کرنے کے باوجود بھی کام تیزی سے جاری ہے ۔ اس صورت حال سے اہل محلہ شدید اذیت کا شکار ہیں اور ان کے خلاف سخت کاروائی چاہتے ہیں ۔ اس بابت ڈائریکٹر ایڈمنسٹریشن نسیم خان سے رابطہ کرنے کی کوشش کی گئی تاہم انہوں نے فون ریسیو نہیں کیا۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *