تیموریہ پولیس اسٹیشن جوئے کے اڈوں کا محافظ بن گیا

کراچی : تھانہ تیموریہ کی حدود نارتھ ناظم آباد بلاک ایل عرفات ٹاؤن نیاز منزل پر ایس ایچ او تیموریہ  نعیم ملک اور ہیڈ محرر ہادی بخش نے صرف 10000 موکل کےعوض اپنے فرض اور ضمیر کا سودا کر لیا ۔

لاٹری کے نام پر بچے جوئے جیسی لعنت کا شکار ہونے لگے۔ علاقے میں بچوں کو جوئے پر لگا کر ہزاروں خاندان کی اولادیں اور نوجوان نسل کو بربادی کے دھانے پر پہنچا دیا ۔

فوٹیج میں دیکھا جا سکتا ہے کے نیاز منزل پر واقع دکان پر بچے شارٹ کٹ میں زیادہ کمانے کے چکر میں جوئے کی دکان میں آنے لگے۔ یہاں 5 روپے کے بدلے 50 روپے اور 10 روپے کے بدلے بچوں کو 100 روپے نکلنے جب کہ 500 کے بدلے 5000 روپے دینے کا لالچ دیا جاتا ہے اور اپنے ہی ٹرینڈ کردہ بچوں کو انعام نکلنے کا جھانسہ دلا کر مذید بچوں کو گھر سے چوری کر کے پیسے لانے کی ترغیب دی جاری ہے ۔

مزید پڑھیں: لائنز ایریا کی رہائشی شازیہ نے SHO تھانہ بریگیڈ پرحراسگی کا الزام عائد کردیا

جب کہ متعلقہ تھانے  کے ایس ایچ او ہیڈ محرر نے  دس ہزار روپے ہفتہ وصولی کے بعد اس غیرقانونی دھندے سے آنکھیں موند لیں ۔ ملک کے معمار کس نہج پر جا رہے ہیں  اس وڈیو سے بخوبی اندازہ ہو سکتا ہے ہماری نسل کا آنے والا مستقبل کیا ہو گا ۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *