مولانا شیرانی اور حافظ حسین احمد کو JUI سے نکال دیا گیا

Sheerani and Hafiz Hussain

اسلام آباد: جمعیت علمائے اسلام (جے یو آئی) ف کے سربراہ مولانا فضل الرحمٰن کی جارحانہ پالیسی پر تنقید کرنے والے مولانا محمد خان شیرانی اور حافظ حسین احمد کو پارٹی سے نکال دیا گیا۔

مقامی میڈیا کی رپورٹ کے مطابق مولانا گل نصیب خان اور مولانا شجاع الملک کو بھی پارٹی سے نکال دیا گیا ہے۔ ذرائع کے مطابق جمعیت علمائے اسلام ف کی مجلسِ عاملہ کا اسلام آباد میں اجلا س ہوا ہےجس میں ان رہنماؤں کو پارٹی سے نکالنے کا فیصلہ کیا گیا۔

مذید پڑھیں : جے یو آئی نے مولانا شیرانی اور حافظ حسین احمد کو پارٹی سے نکال دیا

ذرائع کا کہنا ہے کہ نظم و ضبط کمیٹی کی سفارشات پر مجلسِ عاملہ نے متفقہ فیصلہ کیا۔ ذرائع کا یہ بھی کہنا ہے کہ جے یو آئی ف سے نکالا گیا کوئی رہنما اس ضمن میں وضاحت کرتا ہے اور معافی مانگتا ہے تو کمیٹی اس حوالے سے فیصلہ کرنے میں با اختیار ہو گی۔

اس حوالے سے محمد اسلم غوری کا کہنا ہے کہ جے یو آئی کے پارٹی فیصلوں سے انحراف کرنے والوں کے خلاف بڑا فیصلہ کیا گیا ہے ۔ مولانا محمد خان شیرانی ،حافظ حسین احمد ،مولانا گل نصیب خان اور مولانا شجاع الملک کو پارٹی سے خارج کردیا گیا ہے ۔مرکزی مجلس شوری کی انضباطی کمیٹی کا مولانا عبدالقیوم ہالیجوی کی صدارت میں متفقہ فیصلہ ۔

جماعت سے خارج کئے گئے افراد کے بیانات اور رائے کا پارٹی سے کوئی تعلق نہیں ہو گا ۔قائم مقام امیر مولانا محمد یوسف کی صدارت میں مرکزی مجلس عاملہ اور صوبائی امراء ونظماء نے اجلاس میں فیصلے کی توثیق کر دی ۔خارج کئے گئے افراد کو فیصلے کی کاپیاں بھجوا دی گئی ۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *