نیشنل لیبر فیڈریشن پاکستان کا EOBI کے چیئرمین کیخلاف میدان میں آنے کا اعلان

کراچی : نیشنل لیبر فیڈریشن پاکستان نے ایمپلائز اولڈ ایج بینیفٹ انسٹی ٹیوشن (ای او بی آئی ) کے ریٹائرڈ ہونے والے چیئرمین اظہر حمید خان کو دوبارہ تین سال کے لئے دوبارہ چیئرمین بنانے کے خلاف میدان میں آنے کا اعلان کر دیا ۔

لاہور میں نینشنل لیبر فیڈرینشن پاکستان کے صدر شمس الرحمن سواتی ، صدر نیشنل لیبر فیڈریشن پنجاب شمالی عاشق حسین اور زونل صدر نیشنل لیبر فیڈریشن ڈاکٹر تہذیب الحسن سمیت دیگر محنت کشوں کے نمائندوں نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے اعلان کیا ہے کہ وہ کسی بھی صورت پاکستان سٹیل ملز میں ملازمین کو نکالنے اور نجکاری کرنے اور چئرمین EOBI کی ملازمت میں توسیع نہیں ہونے دیں گے ۔

مزید پڑھیں : ایکٹویسٹ شہلا رشید کا اپنے والد سے تنازع کیا ہے ؟

پریس کانفرنس کرتے ہوئے نیشنل لیبر فیڈرینشن پاکستان کے صدر شمس الرحمن سواتی نے کہا کہ پاکستان اسٹیل مل سے ملازمین سے نکالنے اور اس کی نجکاری کرنے کے خلاف کسی بھی حد تک جائیں گے ۔ حماد اظہر جو خود بھی ایک اسٹیل مل کے مالک ہیں وہ مسلسل جھوٹ بول رہے ہیں ۔کہ ہم نے ملازمین کو گولڈن ہینڈ شیک دیا ہے اور 4544 ملازمین کو نکالا ہے اور مذید لوگوں کو نکالنے کا اعلان کیا ہے ۔

پاکستان اسٹیل مل پاکستان کا اہم ادارہ ہے اور اس کی نجکاری سپریم کورٹ روک چکی ہے ۔ یہ کرپشن کی وجہ سے تباہ ہوا ہے اور اس میں معاشی قتل کا ارادہ کیا ہے اور لاکھوں لوگ اس کی وجہ سے بے روز گار ہونگے ۔ پرفیشنل اور دیانت دار انتظامیہ اسٹیل مل کا واحد ہے ۔ مافیا کو نوازنے کے بجائے پاکستان اسٹیل مل کو نوازہ جائے ۔

مذید پڑھیں : افغان حکومت اور طالبان کے مابین ابتدائی معاہدہ طے پا گیا

ہم مزدوروں کو دعوت دیتے ہیں وہ ہمارے ساتھ نکل کھڑے ہوں ، مزدور جب اس تحریک میں شامل ہو گئے تو اس کے بعد احتجاج پورے ملک میں پھیل جائے گا ۔ اس لئے عمران خان کو اور ان کی کابینہ کو ہوش کے ناخن لینے چاہئے ہیں ۔ اس طرح کے اداروں کو انتظامیہ کو درست کرے اور سیاسی بنیادوں پر بھرتیاں نہ کی جائیں ۔ انہوں نے مذید کہا کہ ای او بی آئی ، سوشل سیکورٹی اور ورکر ویلفیئر فنڈ جیسے اداروں میں بھی اربوں کھربوں کی کرپشن ہوئی ہے ،اس کرپشن کو روکا جائے تاکہ ادارے مضبوط ہوں ۔

شمس الرحمن سواتی نے کہا کہ ہم نے سپریم کورٹ سے رجوع کرنا ہے اور سندھ ہائی کورٹ میں بھی ایک کیس موجود ہے اور عدالتوں کا کام ہے کہ وہ اس پر نوٹس لے ۔ ہم نے لیبر کورٹ میں اسٹیل مل کیس کی درخواست دی ہے اور ہائی کورٹ میں بھی اس کے خلاف گئے ہیں اور سپریم کورٹ کے کیس میں بھی ہم نے فریق بننے کی درخواست دی ہے ۔

مزید پڑھیں : صدرِ مملکت کا مساجد میں ایک بار پھر منی لاک ڈائون کا اعلان

شمس الرحمن سواتی نے اس پریس کانفرنس میں کہا کہ ہم اسٹیل مل پر ہی بات کرنا چاہتے ہیں تاہم ایک جانب حکومت نوکریوں سے نکال رہی ہے تو دوسری جانب ای او بی آئی کے چیئرمین حمید اظہر کو دوبارہ نوکری دی جا رہی  ہے ۔ اظہر حمید خان جو کہ ریٹائرڈ ہونے سے قبل ہی دوبارہ اس منفعت عہدے پر براجمان ہونا چاہتے ہیں ۔

اظہر حمید خان نے کورونا لاک ڈائون کے دوران آٹھ لاکھ روپے سے زائد کا ٹی اے ڈی اے وصول کیا ہے اور اب اجلاس کر کے مذید خزانے پر بوجھ بننے جا رہے ہیں ۔اظہر حمید خان اب بوڑھے ہو چکے ہیں مگر پھر بھی ای او بی آئی کا چیئرمین بننا چاہ رہے ہیں ۔ اظہر حمید خان کو لاہور عدالت نے توہین عدالت کا نوٹس بھی دیا ہے اور وہ 60 سال کی عمر میں ریٹائرڈ ہونے کے بعد دوبارہ ادارے میں نوکری کرنا چاہتے ہیں مگر عدالت میں پیش نہیں ہوتے ۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *