وقف ایکٹ کی واپسی تک جد و جہد جاری رکھیں گے : تحریکِ تحفظِ مساجد و مدارس

اسلام آباد :  تمام مکاتب فکر کے علماء کرام نے ایک مرتبہ پھر اس عزم کا اظہار کیا ہے کہ وقف ایکٹ کی واپسی تک جد و جہد جاری رکھیں گے، تحریک تحفظ مساجد و مدارس کے قایدین نے تمام مکاتب فکر اور تمام مذہبی اور سیاسی جماعتوں کے قائدین سے ملاقاتیں کر چکے ۔

تحریک تحفظ مساجد و مدارس نے اعلان کیا کہ ہوم ورک مکمل ہے ۔ جلد تحریک کا باقاعدہ آغاز کریں گے، علماء کرام نے وقف ایکٹ کو پاکستان میں دینی اور تعلیمی سرگرمیوں کی روک تھام کی کوشش قرار دیا اور کہا کہ یہ ایکٹ آئین پاکستان اور قیام پاکستان کے مقاصد سے انحراف ہے ۔

انہوں نے کہا کہ وقف بل کسی طور قابل قبول نہیں ہر قیمت پر واپس لینا ہو گا، قائدین تحریک نے وزیر مذہبی امور اور پی ٹی آئ میں موجود محب وطن اور دین دوست لوگوں سے اپیل کی کہ وہ حکمرانوں کو دین دشمنی سے باز رکھنے میں کردار ادا کریں۔

مزید پڑھیں: مدارس ایکشن کمیٹی کا ملک بھر کے مدارس میں تعطیلات کا اعلان

تمام مکاتب فکر کے علماء کرام ، دینی مدارس کے مہتممین اور مساجد کے ائمہ و خطباء کا ایک اہم اجلاس جامع مسجد خلفائے راشدین کراچی کمپنی میں مولانا ظہور احمد علوی کی صدارت اور مولانا نذیر فاروقی کی میزبانی میں منعقد ہوا۔

اجلاس میں اہلسنت والجماعت بریلوی مکتب فکر کے مولانا پیر اقبال نعیمی، مولانا ساجد ضیاء,جمعیت علماء پاکستان کے حافظ عامر شہزاد، جمعیت اہلحدیث کے مولانا امیر اسلام آباد مولانا حافظ مقصود احمد، مولانا عبدالکریم، مولانا مفتی عبدالسلام، مولانا عبدالقدوس محمدی، مولانا مفتی عبداللہ، مولانا خلیق الرحمن چشتی، مولانا طاہر عباسی، مولانا شاہد عباسی، مولانا وجیہ الدین، مولانا قاری افتخارحسین سمیت دیگر علماء کرام اور مساجد کے ائمہ و خطباء نے شرکت کی ۔

مزید پڑھیں: مدارس کو مرکزی دھارے میں لانے والا پاکستان مدرسہ ایجوکیشن بورڈ  غیر فعال

اس موقع پر تمام علماء کرام نے اپنے اس دیرینہ عزم کا اعادہ کیا کہ وقف ایکٹ  کی واپسی تک جد و جہد جاری رہے گی- علماء کرام نے وقف ایکٹ کو آئین پاکستان کے منافی اور ںظریہ پاکستان سے انحراف قرار دیا اور کہا کہ یہ ایکٹ پاکستان میں دینی اور تعلیمی سرگرمیوں کی بندش کی کوشش ہے جو کسی صورت قابل قبول نہیں ۔

تحریک تحفظ مساجد ومدارس کے قایدین نے کہا کہ ہمارا ہوم ورک مکمل ہے- اتحاد تنظیمات مدارس اور قومی و مذہبی جماعتوں کے قائدین سے ملاقاتیں کی ہوچکیں بہت جلد عملی اقدامات کا اعلان کیا جائے گا ۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *