بین الاقوامی شہرت یافتہ دینی درسگاہ کے سہ ماہی امتحانات کا آغاز ہوگیا

بین الاقوامی شہرت یافتہ دینی درسگاہ جامعہ بنوریہ عالمیہ شعبہ ملکی وغیر ملکی طلبہ کے سہ ماہی امتحانات کا آغاز 11 اکبوتر بروز جمعرات ہوگا۔ ترجمان جامعہ کے مطابق جامعہ بنوریہ عالمیہ میں شعبہ ملکی وغیر ملکی اور گرلز سیکشن کے تعلیمی سال 2018-19 کا پہلا سمسٹر مکمل ہوگیا

شعبہ حفظ وناظرہ، درجات ابتدائیہ، درس نظامی، تخصص فی الفقہ(مفتی کورس)اور تخصص فی الحدیث و التفسیر القران ، انگلش لنگویج کورس،آئی ٹی کورس سمیت دیگر شعبہ جات کے ملکی وغیر ملکی 5ہزار طلبا وطالبات امتحانات میں شرکت کرینگے۔گزشتہ روز جامعہ بنوریہ عالمیہ کے مہتمم مفتی محمد نعیم کی زیرصدارت مجلس تعلیمی ومجلس شوری کا مشترکہ اجلاس ہوا جس میں سہ ماہی امتحانات کے انتظامات اور تیاریوں کا جائز ہ لیا گیا اور سہ ماہی تعلیمی رپورٹ سے رئیس الجامعہ کو پیش کی گئی۔

رئیس وشیخ الحدیث مفتی محمد نعیم نے تمام اساتذہ ومنتظمین کی کوششوں کو سراہا اورسہ ماہی تعلیمی رپورٹ کو اطمنان بخش قرار دیتے ہوئے کہاکہ مدارس کا امتحانی نظام عصری اداروں کیلئے قابل تقلید ہے اور اساتذہ کی اچھی تربیت کا مظہر ہے مدارس کے امتحانات میں نقل کا تصور نہ ہونا مدارس کی سب سے بڑی کامیابی ہے

انہوں نے کہا کہ عصری تعلیمی اداروں میں سفارش اوررشوت ستانی کی وجہ سے آج طلبہ پڑھائی سے پہلے نقل کے ذرائع تلاش کرنے میں مصروف ہوجاتے ہیں جس کی وجہ سے والدین عصری تعلیم کیلئے اپنے بچوں کو بیرون ممالک بیجنے پر مجبور ہیں جبکہ پاکستانی مدارس میں دنیا بھر کے طلبہ دینی علوم حاصل کرنے کیلئے آتے ہیں۔

انہوں نے کہاکہ عصری اداروں کے تعلیمی نصاب پر توجہ کے ساتھ حکومت کو امتحانی نظام میں بھی بہتری لانے کی ضرورت ہے ۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *